منی لانڈرنگ کیس ، مشتاق چینی 3جون تک جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے

منی لانڈرنگ کیس ، مشتاق چینی 3جون تک جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے

  

لاہور(نامہ نگار)احتساب عدالت کے جج جواد الحسن نے سابق وزیراعلیٰ پنجاب کے صاحبزادے اورپنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف حمزہ شہباز اورسلمان شہباز کی منی لانڈرنگ کیس میں گرفتار مشتاق چینی کو3جون تک جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کردیاہے۔

گزشتہ روز نیب کی جانب سے منی لانڈرنگ کیس میں گرفتار مشتاق چینی کو جسمانی ریمانڈ ختم ہونے پراحتساب عدالت میں پیش کیاگیا، عدالت کوبتایاگیاکہ دوران تفتیش پتہ چلا ہے کہ سلمان شہبازمشتاق چینی کے ساتھ کاروبارچلارہا تھے، اس ضمن میں مختلف اکاونٹس سامنے آئے ہیں، جن میں رقم لائی اورنکلوائی جاتی تھی ،اس حوالے سے ملزم سے مزید پوچھ گچھ کرنی ہے،ملزم کے وکیل نے ریمانڈکی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ مشتاق چینی کا کارروباری لین دین صرف سلمان شہبازسے ہی نہیںتھااوربھی کاربار ی حضرات ہیں جوان کے ساتھ کام کرتے تھے، کیانیب سب کوپکڑلے گا،ابھی تک نیب ایک پائی بھی برآمد نہیں کر سکاہے،عدالت سے استدعاہے کہ مزید ریمانڈنہ دیاجائے۔فاضل جج نے وکلاءکے دلائل سننے کے بعد مشتاق چینی کوجسمانی ریمانڈ پر 3جون تک نیب کے حوالے کرنے کا حکم دے دیاہے ۔علاوہ ازیں نیب کی جانب سے ویسٹ مینجمنٹ کمپنی کے ایم ڈی طاہرمقبول کو ریمانڈ ختم ہونے پر عدالت میں پیش کیا گیا، فاضل جج نے مذکورہ ملزم کو بھی 3جون تک جسمانی ریماند پرنیب کے حوالے کرنے کا حکم جاری کردیاہے۔

مزید :

علاقائی -