حملے، فلاحی ادارے فلسطینیوں کی امداد کیلئے عملی اقدامات کریں، تابش الوری

حملے، فلاحی ادارے فلسطینیوں کی امداد کیلئے عملی اقدامات کریں، تابش الوری

  

بہاولپور (بیورورپورٹ) فلسطین موجودہ صدی کے بد ترین اسرائیلی ظلم و ستم کی زد میں ہے پاکستان کے تمام بڑے بڑے رفاہی اداروں کا 

(بقیہ نمبر54صفحہ6پر)

فرض ہے کہ فوری طور پر بے گھر بے در لاکھوں فلسطینیوں کے لئے بڑی مقدار میں غذا ادویات خیموں اور دوسری ضروری اشیا بھجوائیں معروف پارلیمنٹیرئن اور نظریہ پاکستان فورم بہاولپور کے سربراہ سید تابش الوری نے یوتھ موومنٹ کے وفد سے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ نوجوانوں کو بھی اس حوالے سے ایک موثر کردار ادا کر نا ہو گا عالمی رائے عامہ اور اداروں کوکو متحرک کر نے کے لئے بلا شبہ عوا می مظاہرے بہت اہم ہیں لیکن پچھلے پندھر وا ڑے کے دوران اسرائیل نے فلسطین کے سرحدی علاقے غزہ پر جو سفاکانہ بمباری کی ہے اور ڈھائی سونہتے فلسطینی بچوں عورتوں اور۔ نوجوانوں کو شہیدکرنے اور ہزاروں کو زخمی کرنے کے علاوہ عمارتیں اور گھر تہس نہس کئے ہیں اسکے پیش نظرانھیں بڑے پیمانے پر فوری بڑی امداد کی ضرورت ہے سید تابش الوری نے کہا کہ احتجاجی مظاہروں کے ساتھ پوری مسلم امتہ کو آگے آنا چاہئے اورامدادی دستے بلا تاخیر  فلسطین روانہ کرنا چاہئیں بڑے رفاہی ا دارے پاکستانی عوام سے اپیل کریں گے تو وہ بھی بڑھ چڑھ کر اس اہم فلاحی کام میں حصہ لیں گے ہم اگر جنگ میں حصہ نہیں لے سکتے توجنگ بندی کے بعد مظلوم فلسطینیوں کو ضروریامداد تو فراہم کر سکتے ہیں۔

تابش الوری

مزید :

ملتان صفحہ آخر -