ملکی معیشت ،جی ڈی پی گروتھ  اور حکومتی دعوے ، سابق گورنر سندھ محمد زبیر بھی خاموش نہ رہ سکے 

ملکی معیشت ،جی ڈی پی گروتھ  اور حکومتی دعوے ، سابق گورنر سندھ محمد زبیر بھی ...
ملکی معیشت ،جی ڈی پی گروتھ  اور حکومتی دعوے ، سابق گورنر سندھ محمد زبیر بھی خاموش نہ رہ سکے 

  

 کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن ) مسلم لیگ ن کے مرکزی رہنما اور مریم نواز شریف کے ترجمان محمد زبیر نے کہا ہے کہ گذشتہ سال براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری33فیصدکم ہوئی،جب غیرملکی سرمایہ کاری کم ہوئی ہے تو پھر حکومت معیشت میں بہتری کا دعوٰی کیسے کرسکتی ہے؟

تفصیلات کے مطابق  سابق گورنر سندھ محمد زبیر عمر کا کہنا تھا کہ  پاکستان تحریک انصاف( پی ٹی آئی)کے دور میں 50 لاکھ افراد کا روزگار چلا گیا،یہ ایک اور وجہ ہے کہ معیشت بری شکل میں کیوں رہی؟۔انہوں نے کہا کہ  ملکی معیشت سے متعلق حکومتی اعداد و شمار قابل یقین نہیں ہیں،2018ء کے وسط میں معیشت کا حجم 315 بلین امریکی ڈالر تھا جو پی ٹی آئی کی 3 سالہ ناقص کارکردگی سے 296 ارب رہ گیا ہے۔

واضح رہے کہ اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وفاقی وزیر حماد اظہر نے کہا تھا کہ کورونا کے باوجود 4 فیصد جی ڈی پی گروتھ حاصل کریں گے، معاشی ترقی کی رفتار مزید تیز کریں گے،ملک میں زرمبادلہ کے ذخائر بڑھ کر 23 ارب ڈالر کی سطح پر پہنچ چکے ہیں۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -