سکھر ، پولیس کی لاپرواہی کے سبب اسٹریٹ کرائمز کا سلسلہ نہ تھم سکا

  سکھر ، پولیس کی لاپرواہی کے سبب اسٹریٹ کرائمز کا سلسلہ نہ تھم سکا

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


 سکھر(ڈسٹرکٹ رپورٹر) پولیس کی عدم توجہی و لاپرواہی کے سبب اسٹریٹ کرائم بالخصوص موٹر سائیکلیں چھیننے و چوری کی وارداتوں کا سلسلہ نہ تھم سکا، مسلح ملزمان شہریوں و تاجروں کو لوٹ رہے ہیں اور قیمتی اشیائسے محروم کررہے ہیں، پولیس خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے، سکھر کے سینئر صحافی کے صاحبزادے کی موٹر سائیکل بھی مسجد کے باہر سے چوری کرلی گئی۔ تفصیلات کے مطابق سندھ کے تیسرے بڑے شہر سکھر میں پولیس کی عدم توجہی و لاپرواہی کے سبب چوری، ڈکیتی، رہزنی، لوٹ مار، موٹر سائیکلیں چھیننے اور چوری کی وارداتوں میں اضافہ سے شہری و تاجر عدم تحفظ کا شکار ہوگئے ہیں، کوئی دن ایسا نہیں گزرتا جب شہر کے کسی علاقے سے کوئی موٹر سائیکل چوری نہ ہوتی ہو یا کسی تجارتی مرکز میں تاجر سے لوٹ مار کی واردات انجام نہ دی جاتی ہو، پولیس نے تمام معاملات سے آنکھیں بند کررکھی ہیں اور شہریوں و تاجروں کی شکایات کے باوجود متعلقہ تھانوں کے ایس ایچ اوز پولیس گشت میں اضافے، ملوث ملزمان کی گرفتاری، مسروقہ سامان و موٹر سائیکلوں کی برآمدگی میں ناکام دکھائی دیتے ہیں۔ گزشتہ روز سکھر کے سینئر صحافی عبدالرو¿ف میمن کے بیٹے محمد فیضان گولیمار انڈسٹریل ایریا کی مسجد میں نماز کے لئے گئے تو اپنی موٹر سائیکل مسجد کے باہر کھڑی کردی، جب وہ نماز پڑھ کر واپس آئے تو ان کی موٹر سائیکل غائب تھی۔ متاثرہ شخص نے تھانے میں ابتدائی رپورٹ درج کرادی ہے تاہم پولیس کی جانب سے اب تک ملزمان کی گرفتاری اور مسروقہ موٹر سائیکل کی برآمدگی کے لئے کوئی کارروائی عمل میں نہیں لائی گئی ہے۔