بینکنگ کورٹ میں چھ نادہندگان کےخلاف کروڑوں روپے قرض ریکوری کے دعوے دائر

بینکنگ کورٹ میں چھ نادہندگان کےخلاف کروڑوں روپے قرض ریکوری کے دعوے دائر

لاہور(نامہ نگار)بینکنگ کورٹ میں مختلف مالیاتی اداروں کی جانب سے چھ نادہندگان کے خلاف کروڑوں روپے قرض ریکوری کے دعوے دائر کر دیئے گئے، عدالت نے نادہندگان کو طلبی کے نوٹس جاری کر دیئے۔یونائٹیڈ بینک انتظامیہ نے نادہندہ ملک عبدالوحید کیخلاف دو کروڑ چار لاکھ ننانوے ہزار اور شاہد لطیف ملک کے خلاف ایک کروڑ چھپن لاکھ اٹھاسی ہزار قرض کی ریکوری کا دعوی دائر کیا ہے۔یونائٹیڈ بینک کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا کہ نادہندگان نے کاروبار کیلئے قرض لیا مگر مقرر وقت پر واپس نہیں کیالہذا عدالت نادہندگان کے خلاف ڈگری جاری کرےتاکہ ان کےاثاثےنیلام کرکے قرض وصول کیا جا سکے۔ اسی طرح سمٹ بینک انتظامیہ نےنادہندہ نعم نیازاعوان کیخلاف دو کروڑ چودہ لاکھ چونسٹھ ہزار ریکوری کا دعوی دائر کیاجبکہ نیشنل بینک نے محمود احمد بابو کیخلاف ستائیس لاکھ اسی ہزاراور بینک الفلاح نے شہری محمد طاہر کیخلاف پانچ لاکھ چوالیس ہزار اٹھ سو روپے اور محمد رفاقت شوکت کیخلاف چار لاکھ باون ہزار قرض وصولی کیلئے دعوی دائر کیا۔عدالت نے بینکوں کی جانب سے دائر دعوو¿ں پر کارروائی شروع کرتے ہوئے نادہندگان کو طلبی کے نوٹس جاری کر دیئے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4