پتوکی‘بجلی چوروں کا واپڈا اہلکاروںپر تشدد، سرکاری کاغذات پھاڑ دئیے

پتوکی‘بجلی چوروں کا واپڈا اہلکاروںپر تشدد، سرکاری کاغذات پھاڑ دئیے

پتوکی ( تحصیل رپورٹر ) بجلی چوری پکڑے جانے اور محکمہ کو بقایا جات ادا نہ کرنے پر ملزمان شہامد علی وغیرہ سکنہ 20چک نے واپڈااہلکاروں کو تشدد کا نشانہ بنا ڈالا انہیں حبس بے جا میں رکھ کر سرکاری کاغذات پھاڑ دیئے اور انکی ملکیتی موٹر سائیکل کی بھی توڑ پھوڑ کی ملزمان نے بجلی چوری کے جرم سے بچنے کیلئے واپڈا اہلکاروں کے پاس زبردستی لڑکیاں بٹھا کر جرم چھپانے کی کوشش کی حقائق پر مقدمہ درج، تفصیلات کے مطابق ٹبی 20چک کے رہائشی مشتاق ،ایوب، شہامد وغیرہ نے ڈائریکٹ سپلائی لگا کر بجلی چوری کی ہوئی تھی کہ اس دوران واپڈا اہلکار محمد اعظم اور دیگر ساتھی ملزمان سے بقایا جات بل وصولی کیلئے ان کے پاس گئے تو بجلی چوری کرتے ہوئے موقع پر پکڑے گئے واپڈا اہلکاروں نے ڈائریکٹ سپلائی دیکھ کر اور سابقہ ریکوری نہ دینے پر ملزمان کے کنکشن کاٹنے کی کوشش کی تو ملزمان طیش میں آگئے اور واپڈا اہلکاروں پر ٹوٹ پڑے اور انہیں شدید تشدد کا نشانہ بنایا اور قتل کرنے کی دھمکیاں دیتے رہے ۔

ملزمان نے اپنے اس بجلی چوری کے جرم سے بچنے کیلئے واپڈا اہلکاروں کو زبردستی ایک کمرے میں بٹھا دیا اور انکے پاس کال گرلز کو بلا کر بٹھا دیا اور انکے پاس شراب کی بوتلیں بھی رکھ دیں تاکہ واپڈا اہلکاروں کو اس الزام میں جھوٹے مقدمے میں پھنسا کر بجلی چوری کے جرم سے بچ سکیں اس لئے ملزمان نے یہ ڈراما رچایا لیکن پولیس کے پہنچنے پر جب حقائق سامنے آئے تو پتہ چلا کہ ملزمان نے واپڈاا ہلکاروں کو شدید تشدد کا نشانہ بناکر حبس بے جا میں رکھ کے انکے پاس لڑکیاں بٹھائی ہوئی ہیں پولیس تھانہ صدر نے حقائق پر مبنی ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کر دی ہے۔

مزید : علاقائی