ٹھوکر چوک کے تجارتی مراکز اورنج ٹرین کی زدمیں آ گئے

ٹھوکر چوک کے تجارتی مراکز اورنج ٹرین کی زدمیں آ گئے

لاہور(جاوید اقبال) اورنج لائن میٹروٹرین منصوبہ کی زد میں جین مندر کی کچی آبادی کے بعد ٹھوکر چوک اورسید پور سٹاف کی ہزاروں دکانیں ،پلازے اورتجارتی مراکز آگئے ہیں جن کو مسمار کرنے کیلئے اورنج لائن میٹروٹرین پر وجیکٹ کی انتظامیہ نے ریڈ نشان لگا دیے ہیں جس کے خلاف اہلیان ٹھوکر چوک اوردیگر علاقوں کے متاثرین نے ایکشن کمیٹی تشکیل دے دی ہے۔ایکشن کمیٹی میں گھریلو خواتین ،معمر خواتین وحضرات اوربچوں کو بھی شامل کیا گیا ہے ۔پراجیکٹ کی طرف سے عمارتیں گرانے کیلئے ریڈ اوراورنج نشان لگائے جانے کے خلاف گزشتہ روز ٹھوکر اوردیگر علاقوں کے درجنوں متاثرین نے پروجیکٹ کے چیف انجینئر اسرار سعید سے ملاقات کی اورانہیں اپنی تحریری شکایات جمع کرائیں جن میں کہا گیا ہے کہ پراجیکٹ کی انتظامیہ نظر ثانی کرے اوردوبارہ سروے کرے اوروہ اپنی ذاتی جائیدادیں ڈی سی ریٹ میں کسی صورت نہیں دیں گے۔اگر زبردستی جائیدادیں چھیننے کی کوشش کی گئی تو شہر کے ہر چوک میں احتجاجی خود کشیاں کی جائیں گی جس کی تصدیق جین مندر کے متاثرین نے بھی اپنی خواتین کے ہمراہ کردی ہے۔بتایا گیا ہے کہ ٹھوکر نیاز بیگ ملتان روڈ کے 60مکینوں جن کی اکثریت پلازوں اورمارکیٹ مالکان پر مشتمل ہے کے پلازوں اورمارکیٹوں کا فرنٹ 25سے 35فٹ تک پراجیکٹ میں شامل کرنے کیلئے ایل ڈی اے کے انجینئرنگ اورٹاؤن پلاننگ ونگ نے نشانات لگا دیے ہیں جنہیں کہا گیا ہے کہ وہ اپنی مدد آپ کے تحت جو حصہ پراجیکٹ میں آیا ہے اسے مسمار کر لیں اگر ایسا نہ کیا گیا تو حکومت خود گرائے گی اس کے بدلے میں حکومت انہیں معاوضہ ادا کرے گی جو مقامی ڈی سی ریٹ کے مطابق ہو گا۔ایکشن کمیٹی کے کنوینئر ٹھوکر نیاز بیگ کے علاقے میں اشرف اعوان ہوں گے جبکہ جین مندر کے علاقے میں حاجی یعقوب اورامجد سیٹھ ہوں گے۔دریں اثناء ایکشن کمیٹی ٹھوکر کے کنوینئر اشرف اعوان نے گزشتہ روز 60پلازہ مالکان کے ہمراہ اورنج لائن میٹروٹرین پراجیکٹ کے چیف انجینئر اسرار سعید سے ملاقات کی اورانہیں الگ الگ اپنی درخواستیں جمع کرائیں ۔اس حوالے سے ایل ڈی اے کے چیف انجینئر اسرار سعید کا کہنا ہے کہ کسی سے ناانصافی نہیں کی جائے گی ۔تمام متاثرین کو ان کا حق معاوضہ کی صورت میں ادا کیا جائے گا جس کیلئے معاملات طے کرنے کیلئے کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1