جہلم میں اقلیتی گروہ کی فیکٹری اور مقدس اوراق جلانے کی تحقیقات کی جائیں،علماء کونسل

جہلم میں اقلیتی گروہ کی فیکٹری اور مقدس اوراق جلانے کی تحقیقات کی ...

لاہور( نمائندہ خصوصی )پاکستان میں رہنے والے غیر مسلموں کی جان و مال کا تحفظ حکومت اور مسلمانوں کی ذمہ داری ہے ۔ جہلم میں ایک اقلیتی گروہ کی فیکٹری اور مقدس اوراق جلائے جانے کی مکمل اور غیر جانبدارانہ تحقیقات کروا کر حقائق کومنظر عام پر لایا جائے یہ بات پاکستان علماء کونسل کے صوبہ پنجاب کے صدر حافظ محمد امجد ، علامہ شبیر احمد عثمانی ، مولانا محمد عمر عثمانی ، مولانا محمد اشفاق پتافی نے اپنے ایک مشترکہ بیان میں کہی ۔ انہوں نے کہا کہ جہلم میں اگر مقدس اوراق جلائے گئے تھے تو مجرموں کے خلاف ایکشن لینا پولیس اور حکومت کی ذمہ داری تھی۔ عوام الناس کی طرف سے جذبات میں آکرفیکٹری کو جلانا درست قرار نہیں دیا جا سکتا ۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان علماء کونسل کا مؤقف واضح ہے کہ آئین پاکستان نے مسلمانوں اور غیر مسلموں کے حقوق کا تعین کر رکھا ہے اور کسی گروہ ، جماعت یا فرد کو قانون کو ہاتھ میں لینے کی اجازت نہیں دی جا سکتی۔

مزید : میٹروپولیٹن 1