مخدوم امین فہیم انتقال کر گئے ، نمازجنازہ میں بلاول سمیت ہزاروں افراد کی شرکت

مخدوم امین فہیم انتقال کر گئے ، نمازجنازہ میں بلاول سمیت ہزاروں افراد کی شرکت

  کراچی/اسلام آباد/ملتان/لاہور(آن لائن،آئی این پی،جنرل رپورٹر،نمائندہ خصوصی)پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) کے رہنما مخدوم امین فہیم طویل علالت کے بعد 76 برس کی عمر میں کراچی کے مقامی ہسپتال میں انتقال کر گئے..مخدوم محمد امین فہیم کو نماز جنازہ کے بعد ہفتہ کی سہ پہر ہزاروں سوگواروں کی موجود گی میں ان کے آبائی درگاہ میں ان کے والد کے پہلو میں سپرد خا ک کردیا گیا.پیپلزپارٹی کے سابق رہنماطویل عرصے سے بلڈ کینسر کے عارضے میں مبتلا تھے،مخدوم امین فہیم حال ہی میں لندن سے کراچی منتقل ہوئے تھے جہاں وہ ایک ہسپتال میں زیر علاج تھے اور گزشتہ روز صبح 4بجے خالق حقیقی سے جا ملے۔ صدر مملکت ممنون حسین ،وزیراعظم میاں نوازشریف ، وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشریف،یوسف رضا گیلانی ،راجا پرویز اشرف،وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات پرویز رشید ،مسلم لیگ (ق) کے سربراہ چوہدری شجاعت حسین ، چوہدری پرویز الٰہی ، مولانا فضل الرحمن ، الطاف حسین ، عمران خان ،شاہ محمود قریشی ،اسفند یارولی خان ،آفتاب شیرپاؤ،سراج الحق،میاں رضا ربانی,سپیکر قومی اسمبلی ایاز صادقسمیت تمام سیاسی جماعتوں کے سربراہان نے مخدوم امین فہیم کی وفات پر افسوس کا اظہار کیا اور اہل خانہ کے لئے صبر اور مرحوم کی مغفرت کیلئے دعا کی۔انہوں نے کہا کہ مخدوم امین فہیم کی جمہوریت کیلئے خدمات کو ہمیشہ یاد رکھا جائے گا ۔دسری جانب مخدوم امین فہیم کے انتقال پر پیپلزپارٹی کی اعلیٰ قیادت آصف علی زرداری اور بلاول بھٹو زرداری ،وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہسمیت اہم رہنماؤں نے اظہار افسوس کیا اور کہا کہ مخدوم امین فہیم کی جمہوریت اور پیپلزپارٹی کے لئے قربانیاں لازوال ہیں اور ہمیشہ ہمارے دلوں میں زندہ رہیں گے ، ان کی قربانیاں کبھی فراموش نہیں کی جاسکتیں۔ پیپلز پارٹی کے رہنماؤں کا کہنا ہے امین فہیم مرحوم کا خلا پر نہیں کیا جاسکتا۔ مخدوم امین فہیم کے انتقال پر ملک بھر کے سیاسی رہنماؤں نے گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے۔ پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین اور سابق صدر آصف زرداری نے کہا ہے۔ مخدوم امین فہیم کا انتقال بینظیر شہید کے بعد بہت بڑا نقصان ہے۔ ان کی ملکی سیاست اور جمہوریت کے لیے لازوال قربانیاں ہیں۔ سابق صدر نے کہا انہوں نے پارٹی کے لیے گراں قدر خدمات سرانجام دیں۔ ان کا انتقال صرف پیپلزپارٹی نہیں بلکہ ملکی سیاست کا بھی بڑا نقصان ہے۔ پارٹی کے سینئر رہنما تاجر حیدر نے بھی انہیں زبردست خراج عقیدت پیش کیا۔ پارٹی رہنما جہانگیر بدر نے انہیں پارٹی کا اثاثہ قرار دیا۔ وزیراعظم سندھ قائم علی شاہ نے بھی مخدوم امین فہیم کی وفات پر اظہار افسوس کیا۔اس کے علاوہ اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ، قمر زمان کائرہ سمیت دیگر پیپلزپارٹی کے رہنماؤں نے مخدوم امین فہیم کی وفات کو پیپلزپارٹی اور اس کے کارکنوں کے لئے گہرا صدمہ قرار دیا ۔پیپلز پارٹی کے سینئر رہنما تاج حیدر کا کہنا تھا کہ مخدوم امین فہیم انتہائی دلیر انسان اور پارٹی کے لیے مشعل راہ تھے۔تاج حیدر نے کہا کہ جمہوریت کا ایک اہم سپاہی ’آج ہم میں نہیں رہا‘ اور مخدوم امین فہیم کے انتقال سے پیدا ہونے والا خلا کبھی پْر نہیں کیا جاسکے گا۔پیپلزپارٹی کے سینئر رہنما کا کہنا تھا کہ مخدوم امین فہیم ایک شاعر بھی تھے اور انھوں نے اپنی ساری زندگی جمہوریت کی بالا دستی اور سیاسی جدوجہد میں گزاری۔پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما اور اسپیکر سندھ اسمبلی آغا سراج درانی نے امین فہیم کے انتقال کر دکھ اور رنج کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ امین فہیم کا خلا پر نہیں کیا جا سکتا۔ شرجیل انعام میمن کا کہنا تھا کہ امین فہیم بہت اعلیٰ صفت کے انسان تھے اور وہ ہی مجھے سیاست میں لائے تھے، ان کے انتقال سے پیپلز پارٹی ایک بہترین سیاستدان سے محروم ہو گئی۔ممبر قومی اسمبلی حمزہ شہبازنے پیپلزپارٹی کے رہنما مخدوم امین فہیم کے انتقال پر گہر ے دکھ اور افسوس کا اظہار کیاہے ۔ مسلم لیگ سندھ کے صدر حلیم عادل شیخ نے پیپلزپارٹی کے سینئر رہنما امین فہیم کے انتقال کوملکی تاریخ کا بہت بڑانقصان قراردیا۔دریں اثناء پیپلز پارٹی کے رہنماء مخدوم امین فہیم کی روح کے ایصال ثواب کیلئے پیپلز پارٹی کے زیر اہتمام میاں خالد سعید کے آفس میں ایک دعائیہ تقریب منعقد کی گئی ۔جس میں پیپلز پارٹی کے مرکزی و صوبائی راہنماؤں جن میں سابق سیکرٹری جنرل جہانگیر بدر،مرکزی رہنما پیپلز پارٹی نوید چودھری، سابق صدر لاہور چودھری اسلم گل اور سابق صدر لاہور میاں مصباح الرحمن سمیت دیگر نے شرکت کی ۔

مزید : صفحہ اول