پیرس حملوں میں بال بال بچ جانے والا شخص 9/11کو کہاں تھا ،عجیب و غریب اتفاق

پیرس حملوں میں بال بال بچ جانے والا شخص 9/11کو کہاں تھا ،عجیب و غریب اتفاق
پیرس حملوں میں بال بال بچ جانے والا شخص 9/11کو کہاں تھا ،عجیب و غریب اتفاق

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) ”جسے اللہ رکھے اسے کون چکھے“ کی کہاوت تو آپ نے سنی ہی رکھی ہو گی۔یہ کہاوت پیرس حملوں میں زندہ بچ نکلنے والے ایک امریکی شہری پر صادق آتی ہے۔ پیرس میں بیٹاکلان کے ایک ہال میں ہونے والی فائرنگ میں یہ شخص 36سالہ میتھیوبھی وہاں موجود تھا جو زندہ بچ نکلا۔ یہ شخص اس سے قبل نائن الیون کے موقع پر بھی ان جڑواں ٹاورز کے سانحے میں بھی محفوظ رہا تھا۔ فرانسیسی اخبار لے مونڈے(Le Monde)سے گفتگو کرتے ہوئے میتھیوکا کہنا تھا کہ جب دہشت گرد ہال میں داخل ہوئے تو میں زمین پر لیٹ گیا اور ایک ایک سینٹی میٹر سرکتا ہوا ایک باہر کی طرف کھلنے والے دروازے کے قریب پہنچ گیا۔“

میتھیو نے بتایا کہ”جب میں دروازے کے قریب پہنچا تو وہاں لے مونڈے سے منسلک صحافی ڈینیئل سینی موجود تھا۔ اس نے مجھے سر سے پکڑ کر باہر کھینچ لیا۔ اس وقت میری زبان سے بے ساختہ نکلا، آئی لو یو ڈینیئل، تم میرے لیے فرشتہ بن کر آئے ہو۔“میتھیو کا کہنا تھا کہ جب امریکہ میں ورلڈ ٹریڈ سنٹر سے دہشت گردوں نے جہاز ٹکرائے تو میں اس وقت ورلڈ ٹریڈ سنٹر کے نیچے گلی میں موجود تھا۔ میں اس وقت یونائیٹڈ ایئرلائنز کے ایک عہدیدار کے ساتھ طے شدہ میٹنگ کے لیے جا رہا تھاجو ورلڈ ٹریڈ سنٹر ہی میں ہونی تھی۔ابھی میں گلی میں ہی تھا کہ جہاز آ کر سنٹر سے ٹکرا گئے اور میں محفوظ رہا۔ اگرمیں ایک منٹ جلدی پہنچ جاتا تو میں بھی نائن الیون کے اس واقعے میں لقمہ اجل بن چکا ہوتا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس