جنوبی افریقہ میں سینگوں کی خاطر گینڈوں کا تیزی سے قتل عام کیا جانے لگا

جنوبی افریقہ میں سینگوں کی خاطر گینڈوں کا تیزی سے قتل عام کیا جانے لگا
جنوبی افریقہ میں سینگوں کی خاطر گینڈوں کا تیزی سے قتل عام کیا جانے لگا

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


جوہانسبرگ( بیورورپورٹ)زمین پرگینڈوں کی تعداد بیسویں صدی کے وسط میں چھ لاکھ سے کم ہو کر 28ہزار کے قریب رہ گئی ہے،جنوبی افریقہ جہاں بیشتر گینڈے پائے جاتے ہیں ہر دو گھنٹے میں اس کے سینگ کی خاطر ایک گینڈھے کو ہلاک کر دیا جاتا ہے،ایک اندازے کے مطابق باریک پسے ہوئے سینگ کی قیمت60ہزار ڈالر فی کلو تک پہنچ گئی۔ ہے۔جرائم پیشہ گروہ ،ٹولوں کو بھاری جرمانہ نہ ہونے سے ان گروہوں کو تقویت ملی ہے ،گینڈوں کا اس بے دردی سے قتل عام روکنے کے لئے سخت قانون سازی کرنا ہو گی اور صارفین جن اشیا ء میں گینڈوں کے سینگوں کا استعمال کرتے ہیں اس پر پابندی لگانا ہو گی،اگر اس عمل کو نہ روکا گیا تو آنے والے سالوں میں گینڈوں کی نسل دنیا سے ختم ہو جائے گی اور دنیا بھر میں اکا دکا ہی نظر آئیں گے۔
قتل عام

مزید :

صفحہ آخر -