30ہزار رشوت لیکر بھی ٹیچرکا پنشن کیس کلرک نے لٹکا دیا

30ہزار رشوت لیکر بھی ٹیچرکا پنشن کیس کلرک نے لٹکا دیا

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


ملتان ( سٹاف رپورٹر ) محکمہ تعلیم ایلیمنٹری مردانہ ملتان میں کرپشن عروج پر‘ ریٹائرڈ ہونے والے اساتذہ کی پنشن فائل کی تیاری کے لئے رشوت وصولی کا سلسلہ جاری ہے‘صورتحال یہ ہے کہ رشوت لینے کے باوجود بھی دو دو سال تک پنشن کیس تیار نہیں کیا جاتا ‘دوران سروس فوت ہونے والے اساتذہ کی فیملی پنشن دو دو سالوں تک پڑی رہتی ہے‘ گورنمنٹ ایلیمنٹری سکول مرکز ویسٹ کا ٹیچر غلام سرور پی ایس ٹی سال (بقیہ نمبر36صفحہ12پر )
2014 میں فوت ہو گیا۔ ان کے بیٹے پنشن وغیرہ کے لئے 2 سال سے مارے مارے پھررہے ہیں مگر کلرک اشفاق بھٹہ نے مبینہ طور پر 30 ہزار روپے رشوت لے کر بھی ابھی تک فیملی پنشن کا کیس لٹکایا ہوا ہے‘ کلرک اے جی آفس رشوت دینے کا کہہ کر ہزاروں روپے لے جاتے ہیں‘ یہ سلسلہ ملتان کے گرلز ہائی سکولوں میں بھی جاری ہے‘ ٹیچر پیکچ اور چھٹیوں و پروموشن سب کاموں کے لئے رقم وصول کی جاتی ہے‘ بیشترریٹائر ملازمین نے محکمہ تعلیم کے دفاتر کے سامنے فوٹو اسٹیٹ و کمپیوٹر کی دکانیں کھول رکھی ہیں‘ اس ضمن میں محکمہ تعلیم سکولز کے حکام کا کہنا ہے کہ پنشن کے لئے کوئی رکاوٹ نہیں ڈاتی جاتی ‘اس کے علاوہ اہلکاروں پر پنشن اور ریٹائرمنٹ کیس کے لئے پیسے لینے پر پابندی اور سختی کی ہوئی ہے۔