فلو کی ویکسین میں سور کی ملاوٹ، ایسا انکشاف منظر عام پر کہ دنیا بھر کے مسلمان والدین پریشان ہوگئے، آپ بھی ہمیشہ احتیاط کیجئے

فلو کی ویکسین میں سور کی ملاوٹ، ایسا انکشاف منظر عام پر کہ دنیا بھر کے مسلمان ...
فلو کی ویکسین میں سور کی ملاوٹ، ایسا انکشاف منظر عام پر کہ دنیا بھر کے مسلمان والدین پریشان ہوگئے، آپ بھی ہمیشہ احتیاط کیجئے

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک)دنیا بھر میں استعمال کی جانے والی فلو کی ویکسین میں ایک ایسی چیز استعمال کیے جانے کا انکشاف ہوا ہے کہ مسلمان پریشان ہو گئے ہیں۔ یہ انکشاف برطانیہ میں ہوا جہاں محکمہ نیشنل ہیلتھ سروسز نے سکول میں 2مسلمان بچیوں کوفلو سے بچاﺅ کی ایسی ویکسین دے دی جس میں سور کے اجزاءبھی شامل تھے۔ معلوم ہونے پر بچیوں کے والدین سراپا احتجاج ہیں اور نیشنل ہیلتھ سروسز سے معافی کا مطالبہ کر دیا ہے۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق محمد شاہ نامی شخص کی بیٹی اور بھانجی کو مقامی جنرل فزیشن نے ویکسین دی۔ محمد شاہ کی بیٹی ویکسین کا لیٹر لے کر گھر آئی تو اس میں لکھی ہوئی ویکسین پڑھ کر وہ سیخ پا ہو گیا کیونکہ اس میں سور سے حاصل کی گئی جیلی بھی شامل ہوتی ہے۔

’ میں نے جنت دیکھی لیکن ماں باپ کی محبت اور دُکھ کی وجہ سے واپس لوٹ آئی ‘ حادثے میں شدید زخمی ہونے والی 6 سالہ بچی نے ایسا انکشاف کر دیا کہ دنیا بھر میں تہلکہ برپا ہو گیا
ویسٹ یارک شائر کے شہر بریڈ فورڈ کے رہائشی محمد شاہ نے نیشنل ہیلتھ سروسز کو اس معاملے میں شکایت کی جس پر تحقیقات شروع کر دی گئی ہیں۔ محمد شاہ کا کہنا تھا کہ ”ہمارے مذہب میں یہ ناپاک جانور کسی بھی شکل میں استعمال کرنے کی اجازت نہیں ہے۔ نیشنل ہیلتھ سروسز کے اس اقدام سے ہمارے جذبات کو شدید ٹھیس پہنچی ہے۔ ہم پریشان ہیں کہ ہمیں بتائے بغیر ہمارے بچوں کو یہ ویکسین پلا دی گئی۔ میرے خیال میں سینکڑوں مسلمان خاندان اس سے متاثر ہوئے ہوں گے اور انہیں معلوم بھی نہیں ہو گا۔ ہم مسلمانوں کے لیے یہ بہت سنجیدہ معاملہ ہے۔ ڈاکٹروں کو معلوم ہونا چاہیے کہ مسلمان بچوں کو دی جانے والی ادویات میں کیا کیا چیزیں شامل ہیں۔“

مزید :

ڈیلی بائیٹس -