نوبیاہتا دلہن نے سمجھا کہ ماں بننے والی ہے، خوشی خوشی ڈاکٹر کے پاس گئی تو اس نے معائنہ کرنے کے بعد ایسی بات کہہ دی کہ واقعی پیروں تلے زمین نکل گئی، وہ حاملہ نہ تھی بلکہ۔۔۔

نوبیاہتا دلہن نے سمجھا کہ ماں بننے والی ہے، خوشی خوشی ڈاکٹر کے پاس گئی تو اس ...
نوبیاہتا دلہن نے سمجھا کہ ماں بننے والی ہے، خوشی خوشی ڈاکٹر کے پاس گئی تو اس نے معائنہ کرنے کے بعد ایسی بات کہہ دی کہ واقعی پیروں تلے زمین نکل گئی، وہ حاملہ نہ تھی بلکہ۔۔۔

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) برطانیہ میں ایک نوبیاہتا خاتون کا شادی کے فوری بعد پیٹ بڑھنے لگا جس پر اس نے سمجھا کہ وہ ماں بننے والی ہے۔ خوشی خوشی وہ ڈاکٹر کے پاس گئی لیکن ڈاکٹر نے ایسی بات بتا دی کہ اس کے پیروں کے نیچے سے زمین نکل گئی۔ دراصل خاتون حاملہ نہیں تھی بلکہ اسے کینسر لاحق ہو گیا تھا اور پیٹ میں بچے کی بجائے کینسر کے غیرمعمولی خلیے نمو پا رہے تھے۔ ویب سائٹ worldwideweirdnews.com کی رپورٹ کے مطابق 35سالہ سٹیفنی تھیوبیلڈ اور 38سالہ مائیکل کی کچھ عرصہ قبل ہی شادی ہوئی تھی۔

’میری بیوی کو گولی ماردو ،ویسے بھی اس کا کوئی فائدہ نہیں‘،وہ آدمی جس نے بینک ڈکیتی کے دوران ڈاکو سے یہ افسوسناک بات کہہ دی،لیکن اب اسے بہادری کا ایوارڈ دیا جارہاہے،ایساکیوں؟حقیقت جان کر آپ کی آنکھیں بھی کھلی کی کھلی رہ جائیں گی
مانچسٹر کی رہائشی سٹیفنی پانچ بھائیوں کی اکلوتی بہن تھی اوراس کے تمام بھائیوں کی اولاد تھی۔ اس کی والدہ سٹیفنی کے حاملہ ہونے کی خبر سن کر بہت خوش تھی۔ تاہم حمل کے 12ویں ہفتے کے سکین میں ڈاکٹر نے کینسر کا انکشاف کردیا جس سے خاندان کی خوشیاں غارت ہو گئیں۔ رپورٹ کے مطابق سٹیفنی کی سرجری کرکے کینسر زدہ خلیے نکال دیئے گئے اور اسے کیموتھراپی کے عمل سے بھی گزارا گیا، جس کے بعد وہ صحت مند تو ہو گئی ہے تاہم ڈاکٹروں نے اسے یہ بری خبر بھی سنا دی ہے کہ اب وہ کبھی صحت مندانہ طریقے سے حاملہ نہیں ہو سکے گی۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -