ڈی ایچ کیو ہسپتال مردان میں بے سہارا افراد کیلئے شلٹر ہوم کا قیام

ڈی ایچ کیو ہسپتال مردان میں بے سہارا افراد کیلئے شلٹر ہوم کا قیام

  



مردان(بیورورپورٹ)ڈپٹی کمشنر مردان محمد عابد خان وزیر نے کہا ہے کہ صوبائی حکومت کی ہدایت پر ڈی ایچ کیو ہسپتال مردان میں بے سہارا مرد اور خواتین کے لئے پناہ گاہ (شلٹر ہوم) کا قیام عمل میں لایا گیا ہے تاکہ غریب اور نادار شخص یہ محسوس نہ کریں کہ رات گزارنے کی جگہ میسر نہیں ہے۔ ان خیالا ت کا اظہار انہوں نے محکمہ سوشل ویلفیئر کے زیر انتظام ڈی ایچ کیو ہسپتال مردان میں پناہ گاہ (شلٹر ہوم) کے افتتاح کے موقع پر کیا۔ اس موقع پر ایڈیشنل ڈپٹی کمشنرز، نیک محمد خان، جان محمد خان، اسسٹنٹ کمشنر مس گل بانو، ڈسٹرکٹ سوشل ویلفیئر آفیسر سید علی بخش، ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ڈاکٹر باسط، مرکزی تاجران کے صدر ظاہر شاہ، اور دیگر محکموں کے افسران موجود تھے۔ ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ پہلی دفعہ مردان میں بے سہارا مرد اور خواتین کے لئے رات گزارنے کے لئے بہترین پناہ گاہ کا قیام عمل میں لایا گیاہے جس میں 70افراد کے رہنے کی گنجائش موجود ہیں۔ ان افراد کے لئے کھانے پینے کے ساتھ ساتھ سیکورٹی کا بہترین انتظام میسر ہوگا۔ انہوں نے ضلع کے مخیر حضرات سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ صوبائی حکومت اور ضلعی انتظامیہ نے خدمت خلق کا آغاز کیا، جس میں وہ حکومت کیساتھ بھر پور تعاون میں شریک ہو۔ تاکہ نادار شہری جو گھر بار نہیں رکھتے، فٹ پاتھوں، مارکیٹوں اور کھلے مقامات پر رات گزارنے سے بچ سکیں۔ ان افراد کے لئے رات گزارنے کا انتظام کیا گیا، مزید ان افراد کو صبح کا ناشتا اور رات کا کھانا فراہم کیا جائیگا۔ انہوں نے اس سلسلے میں تمام شہریوں سے گزارش کی کہ اگرا ٓپ کے آس پاس ایسے افراد موجود ہو تو برائے مہربانی انکو اس بارے میں آگاہی فراہم کریں، کہ وہ اپنے آپ کو سوشل ویلفئیر ڈیپارٹمنٹ کے ساتھ رجسٹرڈ کریں اور ہمارے سٹاف کو مطلوبہ کوائف مہیا کریں تاکہ یہ سہولت ضرورت مند لوگوں کو بخوبی فراہم کی جاسکے۔ ڈپٹی کمشنر نے متعلقہ حکام کو ہدایت کی کہ روزانہ کی بنیاد پر رات تمام بازاروں کے فٹ پاتھوں، مارکیٹوں بے سہارا، غریب اور نادار افراد و خواتین سرکاری پناہ گاہ کو پہنچائیں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر