لاہور میں سموگ کی شدت میں کمی کیلئے مصنوعی بارش کی تجویز،35 کروڑ خرچ ہونگے

لاہور میں سموگ کی شدت میں کمی کیلئے مصنوعی بارش کی تجویز،35 کروڑ خرچ ہونگے
لاہور میں سموگ کی شدت میں کمی کیلئے مصنوعی بارش کی تجویز،35 کروڑ خرچ ہونگے

  



لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)لاہور میں سموگ کی شدت میں کمی کیلئے مصنوعی بارش کی تجویزدیدی گئی،،ڈی جی ماحولیات تنویر وڑائچ نے لاہور میں مصنوعی بارش کی تجویز دی،شہر میں مصنوعی بارش کرنے پر 35کروڑ روپے خرچ کا تخمینہ بھجوایا گیا ہے۔ڈی جی ماحولیات نے کہا کہ کمشنر لاہور کو مصنوعی بارش کی تیاریوں کیلئے ٹاسک دیا ہے ،مصنوعی بارش مہنگا عمل ہے لیکن عوام کی صحت زیادہ عزیز ہے ۔

نجی ٹی وی دنیا نیوز کے مطابق سموگ کی روک تھام کیلئے کمشنر لاہور ڈویژن آصف بلال لودھی نے مصنوعی بارش کے حوالے سے سمری سیکرٹری فنانس کو بھجوا دی،شہر میں مصنوعی بارش کرنے پر 35کروڑ روپے خرچ کا تخمینہ بھجوایا گیا ہے۔کمشنر لاہور ڈویژن آصف بلال لودھی کا کہنا ہے سیکر ٹری خزانہ کو سمری بھجوا دی ہے ، راکٹ فائر کے ذریعے کلاﺅڈ سیڈنگ کا عمل وزیر اعلیٰ پنجاب کی اجازت سے مشروط ہے۔اگر اجازت مل گئی تو شہر کے سموگ زدہ مختلف علاقوں میں مصنوعی بارش کروائی جائے گی، محکمہ موسمیات اور محکمہ ماحولیات کے احکامات پر بادل بنانے کیلئے راکٹ فائر کئے جائیں گے۔

کنسلٹنسی کےلئے دبئی اور چین سے بات چل رہی ہے ورکنگ پیپر اور پی سی ون کی تیاری وزیر اعلیٰ کی اجازت کے بعد شروع کر دی جائے گی۔ آنے والے سالوں میں سموگ کم نہیں بلکہ زیادہ شدت اختیار کرے گی۔ کمشنر لاہور کا کہنا ہے کہ محکمہ ماحولیات کو کلاﺅڈ سیڈنگ کی طرف آنا ہو گا ، تاکہ شہری اس پریشانی سے بچ سکیں۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور