سیاسی نوسرباز ملکی بحران حل کرنے میں ناکام  جماعت اسلامی ہی مسائل حل کریگی‘ ذیشان اختر

 سیاسی نوسرباز ملکی بحران حل کرنے میں ناکام  جماعت اسلامی ہی مسائل حل ...

  

بہاولپور(ڈسٹرکٹ رپورٹر)نائب امیر جماعت اسلامی جنوبی پنجاب سید ذیشان اختر نے کہا ہے کہ سیاسی، پارلیمانی اور آئینی بحرانوں کا علاج آئین پاکستان کی بالادستی کو قبول کر لینے میں ہے۔ پارلیمنٹ، حکومت، عدلیہ اور(بقیہ نمبر42صفحہ 6پر)

 سول بیوورکریسی اپنے آپ کو آئینی حدود کا پابند بنائے۔ گلگت بلتستان انتخابات نے قومی سطح پر ایک بار پھر دھاندلی زدہ، مشکوک اور من پسند نتائج کا مسئلہ کھڑا کردیاہے۔ آئین، قوانین اور انتخابی قوانین میں کوئی خرابی نہیں، اصل خرابی مقتدر طبقوں اور اقتدار کے رسیا سیاسی آوارہ گروہوں کی ہے جن میں جمہوریت، قانون،سیاسی اخلاق اور پارلیمانی قدریں ہیں ہی نہیں۔ ان کے ہاتھوں جمہوریت اور انتخابی عمل داغ داغ ہوجاتاہے۔ انہوں نے کہاکہ جماعت اسلامی ملک گیر تحریک کی بنیاد پر عوام کو بیدار اور متحرک کریگی کہ اسلام کی حکمرانی ہو۔ عوام کے مسائل کے حل کیلئے قومی وسائل کی منصفانہ تقسیم، سود، قرضوں،کرپشن کی معیشت کا خاتمہ او ر اسلامی معاشی نظام کا قیام عمل میں آئے۔ بار بار آزمائے سیاسی نوسربازوں سے ملک و ملت بحرانوں سے نہیں نکلے گا۔ عوام جماعت اسلامی کا ساتھ دیں۔ آئین اور قانون کی بالادستی کے ساتھ وفاق، صوبوں اور انسانوں کے حقوق محفوظ ہونگے۔

ذیشان اختر

مزید :

ملتان صفحہ آخر -