بھارت ، اخلاق احمد کو باقاعدہ منصوبہ بندی کے تحت مارا گیا ، اسکے گھرمیں گائے کا گوشت نہیں تھا ، تحقیقات کمیشن

بھارت ، اخلاق احمد کو باقاعدہ منصوبہ بندی کے تحت مارا گیا ، اسکے گھرمیں گائے ...

  



 نئی دہلی(اے این این) بھارتی ریاست اترپردیش کے علاقے ددری میں ہندو بلوائیوں کے ہاتھوں اخلاق احمد نامی مسلمان شہری کی ہلاکت کی تحقیقات کرنے والے کمیشن نے اپنی رپورٹ مکمل کرلی جس میں کہاگیاہے کہ اخلاق احمد کے گھر میں گائے کا گوشت نہیں تھا بلکہ اسے باقاعدہ منصوبہ بندی کے تحت مارا گیا۔کمیشن کی ترجمان فریدہ عبداللہ نے میڈیا کو بتایا کہ کمیشن نے اپنی تحقیقات مکمل کرلی ہیں ،ہماری تحقیقات میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ یہ سانحہ اچانک رونما نہیں ہوا اور نہ ہی اخلاق پر حملہ اچانک ردعمل تھا ۔ مسلمان شہری کو باقاعدہ منصوبہ بندی کے تحت مارا گیا ہے۔ اس قتل کے لئے راستہ بنایا گیا ۔ اخلاق احمد کے گھر میں گائے کا گوشت نہیں تھا۔ اس بات کے ٹھوس ثبوت ہیں کہ اس واقعہ کی باقاعدہ منصوبہ بندی کی گئی اور لوگوں کو مشتعل کرنے کیلئے گائے کے گوشت کی افواہ پھیلائی گئی ۔ واضح رہے کہ چند دن قبل اترپردیش میں اخلاق نامی شہری کو ہندوؤں کے مجمع نے یہ الزام لگا کرقتل کردیا تھا کہ اس کے گھر میں گائے کا گوشت ہے۔

مزید : صفحہ اول