اکوڑہ آایچ سی ہسپتال پرانٹی کرپشن کا چھاپہ درجنوں غیر قانونی بجلی کنکشن منقطع اکوڑہ

اکوڑہ آایچ سی ہسپتال پرانٹی کرپشن کا چھاپہ درجنوں غیر قانونی بجلی کنکشن ...

  



 خٹک ( نمائندہ پاکستان ) اکوڑہ ار ایچ سی ہسپتال پر نوشہرہ انٹی کرپشن کا چھاپہ ۔ درجنوں غیر قانونی بجلی کے کنکشن پکڑے گے ہسپتال کا نظام درھم برھم ہسپتال کے عملے میں بجلی کے پول سے ڈائریکٹ کنکشن لے رکھے تھے ۔ ہسپتال کے قریبی مقامی لوگوں نے بھی ہسپتال کے پول سے ڈائریکٹ کنکشن لے کر بجلی چوری کر رہے تھے۔لیڈی ڈاکٹر ہسپتال میں ڈیوٹی کے بجائے بنگلے میں مریضوں کا چیک اپ کر کے بھاری فیس وصول کر رہے تھی ۔ لیڈی ڈاکٹر کو وارننگ۔ تفصیلات کے مطابق ڈائریکٹر انٹی کرپشن پشاور ضیاء اللہ طورو کی خصوصی ہدایت پر نوشہرہ انٹی کرپشن کے انسپکٹر محمد طعیب اور سب انسپکٹر محمد افتخار کا اکوڑہ خٹک ار ایچ سی(RHC) ہسپتال پر اچانک چھاپہ ۔ چھاپے کے دوران ہسپتال میں صرف ایم سی موجود تھا جبکہ لیڈی ڈاکٹر ڈیوٹی کے دوران ہسپتال میں اپنے سرکاری بنگلے میں مریضوں کی چیک اپ میں مصروف تھی ۔انٹی کرپشن چھاپے کا عمل ہوتے ہی لیڈی ڈاکٹر ہسپتال ائیں جیسے اانسپکٹر طعیب نے وارننگ دیتے ہوئے ڈیوٹی کے دوران ہسپتال میں چیک اپ کرنے کو کہا۔انسپکٹر محمد طعیب نے ٹیم کے ہمراہ ہسپتال کے اندر راونڈ لگاتے ہوئے درجنوں غیر قانونی بجلی کے کنکشن دیکھتے ہیSDO اکوڑہ پیسکو کو طلب کر لیا اور SDO نے واپڈہ لائن سٹاف کے زریعے تمام کنکشن کاٹ دیے۔جبکہ ہسپتال کے قریبی واقع بنگلے کے مالکان نے بھی ہسپتال کے پول سے ڈائریکٹ کنکشن لے رکھے تھے۔ اس موقع پر ایم ایس ڈاکٹر کامران نے کہا کہ ہسپتال کی حالت زار دیکھنے کے قابل ہے 2 ڈاکٹر2 لیڈی ڈاکٹر 4 ٹیکنشین کے زریعے ہسپتال چلا جا رہے ہے انہوں نے سٹاف کی کمی پورا کر کے 4 ڈاکٹر 4 لیڈی ڈاکٹر 4 ٹیکنشن وارڈ بوائے اور سویپر ہسپتال میں تعینات کر کے ہسپتال کو 24 گھنٹے میں 3 شفٹ میں کرنے کا مطالبہ کیا۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...