سیریز کھیلنی ہے یا نہیں:شہریارخان بھارتی ہم منصب کو خط لکھنے سے باز نہ آئے، نامناسب رویے کا شکوہ

سیریز کھیلنی ہے یا نہیں:شہریارخان بھارتی ہم منصب کو خط لکھنے سے باز نہ آئے، ...
سیریز کھیلنی ہے یا نہیں:شہریارخان بھارتی ہم منصب کو خط لکھنے سے باز نہ آئے، نامناسب رویے کا شکوہ

  



لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک)پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین شہریارخان بھارت میں اتنا کچھ ہونے کے بعد بھی باز نہ آئے اور بھارتی ہم منصب کو ایک خط لکھا ہے کہ پاکستان کے ساتھ سیریز کھیلنی ہے یا نہیں جلد بتایا جائے۔خط میں انہوں نے بھارتی ہم منصب سے نامناسب سلوک کے بارے میں گلے شکوے بھی کئے ہیں۔تفصیلات کے مطابق شہریارخان نے سششانک منوہر کو لکھے گئے خط میں گلہ کیاہے کہ آپ کی دعوت پر بھارت آئے تھے لیکن ہمارے ساتھ اچھا سلوک نہیں کیا گیا۔انہوں نے شکوہ کیا کہ بھارتی کرکٹ بورڈ نے مہمان نوازی کے تقاضے تک پورے نہیں کیے۔ واضح رہے کہ شہریار خان بی سی سی آئی کے چیئرمین کی دعوت پر انڈیا گئے تھے جہاں انہوں نے بھارتی کرکٹ بورڈ حکام سے پاک بھارت کرکٹ سیریز پر مذاکرات کرنے تھے لیکن مذاکرات سے تھوڑی دیر قبل ہی شِیوسینا کے غنڈوں نے بھارتی کرکٹ بورڈ کے دفتر پر دھاوا بول دیا تھا جس کے بعد شِیوسینا نے شہریار خان کو فوری طور پر بھارت چھوڑنے کی دھمکی دی تھی۔ مذاکرات کی منسوخی کے بعد شہریار خان بدھ کے روز وطن واپس پہنچے ہیں۔ ان کے عاجزانہ اور بھارت کے ساتھ ہمدردانہ رویہ پر پاکستان میں سخت تنقیدکی جارہی تھی اور عوام میں شدید غم وغصہ پایا جارہا تھا۔ عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید نے کہا تھا کہ شہریارخان کا بھارت میں شِیوسینا اور واہگہ بارڈرپر پاکستانی عوام منہ کالاکرے۔

مزید : کھیل /اہم خبریں


loading...