ایک سال میں سعودی عرب میں 86ہزار گھریلو ملازمائیں گھروں سے بھاگ گئیں ، ممکنہ وجہ بھی سامنے آ گئی

ایک سال میں سعودی عرب میں 86ہزار گھریلو ملازمائیں گھروں سے بھاگ گئیں ، ممکنہ ...
ایک سال میں سعودی عرب میں 86ہزار گھریلو ملازمائیں گھروں سے بھاگ گئیں ، ممکنہ وجہ بھی سامنے آ گئی

  



ریاض (مانیٹرنگ ڈیسک )سعودی عرب میں ایک سال میں اتنی گھریلوملازمائیں سعودی مالکان کے گھروں سے بھاگ کھڑی ہوئیں کہ آپ سوچ بھی نہیں سکتے ۔ ایک سال میں 86ہزار گھریلو ملازم خواتین اپنے مالکان کا گھر چھوڑ کر بھاگ گئیں ۔ شوریٰ کونسل نے محض ایک سال کے اندر86ہزار گھریلو ملازم خواتین کے مالکان کے گھروں سے بھاگنے کی وجوہات جاننے کے لئے تفتیش کا حکم دےد یا ہے اور شوریٰ کونسل کے ارکان نے کہا ہے کہ یہ ایک سنجیدہ مسئلہ ہے جو نہ صرف ملکی معیشت کو متاثر کرے گا بلکہ سکیورٹی مسائل کو بھی جنم دے گا ۔

بعض کا کہنا ہے کہ ہمارے گھروں سے ہماری ملازمائیں بھاگ گئی ہیں جبکہ ایک مقامی کمیونٹی رہنما نے بتایا ہے کہ وہ خواتین تنخواہیں نہ ملنے ،خوراک کم ملنے اور مالکان کے بُرے سلوک سے دلبرداشتہ ہو کر چلی گئیں ۔ یہ شخص مالکان کے سلوک سے تنگ آ کر بھاگنے والی خواتین کی مدد کرتا رہا ہے ۔ شوری کونسل کے ارکان نے ہزاروں خواتین ملازموں کے گھروں سے بھاگنے کے واقعہ پر وزیر محنت کی کارکردگی کو آڑھے ہاتھوں لیتے ہوئے ان پر شدید تنقید کی ۔ اعدادو شمار کے مطابق سعودی عرب میں 11,912,209کی مضبوط لیبر فورس موجود ہے تاہم اس میں صرف 47فیصد سعودی شہری جبکہ 57فیصد غیر ملکی شامل ہیں ۔

مزید : بین الاقوامی


loading...