مرکزی طاقت کے طورپر نہ دیکھاجائے ، تمام اداروں کو اپنا کام کرناچاہیے : جنرل راحیل شریف کے حوالے سے امریکی اخبار کا دعویٰ

مرکزی طاقت کے طورپر نہ دیکھاجائے ، تمام اداروں کو اپنا کام کرناچاہیے : جنرل ...
مرکزی طاقت کے طورپر نہ دیکھاجائے ، تمام اداروں کو اپنا کام کرناچاہیے : جنرل راحیل شریف کے حوالے سے امریکی اخبار کا دعویٰ

  



واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک) امریکی میڈیا نے جنرل راحیل شریف کو دہشتگردی اور جرائم پیشہ گینگز کیخلاف کارروائی پرپاکستان میں ہیروقراردیدیا ۔

امریکی اخبار وال سٹریٹ جنرل میں ایک مضمون شائع ہواہے جس میں کہاگیاہے کہ سیکیورٹی اور خارجہ پالیسی کا زیادہ کنٹرول پاکستانی فوج کے ہاتھ میں ہے ، اور خیال کیاجاتاہے کہ وزیراعظم نواز شریف نے بھی فیصلہ کیاہے کہ لڑائی کی بجائے یہ ذمہ داری فوج کو ہی دیدی جائے تاہم ایک دلچسپ بات یہ ہے کہ چند روز قبل ایک امریکی وفد نے آرمی چیف سے راولپنڈی میں ملاقات کی تو آرمی چیف کا کہناتھاکہ اُن کے لیے یہ چیز بہت اہم ہے کہ پاکستان میں اُنہیں مرکزی طاقت کے طورپر نہ دیکھاجائے بلکہ تمام اداروں کو اپنا کام کرناچاہیے .

اخبار نے لکھاکہ جنرل راحیل شریف نے سب سے زیادہ متاثرہ اور پاکستان کے بڑے شہر کراچی میں امن وامان بحال کردیاہے جس سے آرمی اور سیاسی قوتوں کو تقویت ملی ہے جہاں جمہوریت نے اپنی جڑیں مضبوط کرنے کے لیے بہت کوشش کی ہے ۔ امریکہ کے حالیہ اور سابق حکام کا خیال ہے کہ نوازشریف نے کچھ معاملات راحیل شریف کے سپر د کردیے ہیں اور جبکہ وزیراعظم کی توجہ معیشت اور کچھ دیگر مسائل پر ہے ، وزیراعظم اس صورتحال پر اطمینان میں ہیں کہ جنرل راحیل شریف سویلین اداروں کے معاون ہیں۔

مزید : قومی /اہم خبریں


loading...