پاکستان امن اور مصالحت کیلئے افغان حکومت کی طے کردہ ترجیحات پر عمل کریگا:سرتاج عزیز

پاکستان امن اور مصالحت کیلئے افغان حکومت کی طے کردہ ترجیحات پر عمل ...

  

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر)مشیر خارجہ سرتاج عزیز نے کہا ہے کہ پاکستان امن اور مصالحت کیلئے منتخب افغان حکومت کی طے کردہ ترجیحات پر عمل کریگا، افغانستان میں کوئی ہمارا فیورٹ نہیں ،پاکستان کا تمام جنگجوؤں کو واضح پیغام یہی ہے کہ کوئی بھی افغانستان پر اپنے طور پر قبضہ نہیں کر سکتا امن کی کنجی مذاکر ات میں ہے۔ سرتاج عزیز نے گزشتہ روز سینٹر فار ریسرچ اینڈ سیکیورٹی سٹڈیز (سی آر ایس ایس ) کے زیر اہتمام پاک افغان مکالمے کے دوران فغان حکومت اور حزب اسلامی کے درمیان ہونیوالے معاہدے کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ اس معاہدے سے دوسرے گروپوں کو بھی مذاکرات کی ترغیب ملنی چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ ان گروپوں کو اس حقیقت کا ادراک کرنا چاہئے کہ یہ ایک مختلف افغانستان ہے جو امن کا خواہاں ہے ۔ سرتاج عزیز نے کہا کہ پاکستان کا تمام جنگجوؤں کو واضح پیغام یہی ہے کہ کوئی بھی افغانستان پر اپنے طور پر قبضہ نہیں کر سکتا اور امن کی کنجی مذاکر ات میں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہماری خواہش ہے کہ افغان حکومت اور طالبان خود اپنے مسائل کوحل کریں ہم مسائل کے حل کیلئے کسی بھی طرح کی مدد فراہم کرنے کیلئے انکے ساتھ کھڑے ہیں ۔ مشیر خارجہ نے افغانستان میں امن عمل کیلئے متفقہ طرز فکر سامنے آنے کا خیر مقدم کرتے ہوئے امید ظاہر کی کہ اس سے تمام فریقین کی اس عمل میں شرکت کی حوصلہ افزائی ہو گی۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان تمام طالبان دھڑوں کو امن عمل کا حصہ بننے کیلئے قائل کرنے کی ہر ممکن کوشش کر رہا ہے اور ایسے اشارے ملے ہیں کہ ان میں سے اکثر اس عمل میں شامل ہونے میں دلچسپی رکھتے ہیں ۔

سرتاج عزیز

مزید :

صفحہ اول -