لیسکو شہر میں بجلی چوری کی بڑھتی ہوئی شرح روکنے میں ناکام

لیسکو شہر میں بجلی چوری کی بڑھتی ہوئی شرح روکنے میں ناکام

  

لاہور(کامرس رپورٹر) وزارت پانی و بجلی کی خصوصی ہدایات کے باوجود لیسکو شہر میں بجلی چوری کی بڑھتی ہوئی شرح کو روکنے میں ناکام ہو گئی ہے جبکہ کمپنی کو لائن لاسز میں 6 ماہ مسلسل اضافے کی وجہ سے ڈیڑھ ارب روپے کا نقصان برداشت کرنا پڑاہے ۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ لیسکو حکام کی بجلی چوروں کیخلاف کارروائیاں اور آپریشن صرف پیپر ورک تک محدود رہ گئیں۔تفصیلات کے مطابق لیسکو شہر میں بجلی چوری کی بڑھتی ہوئی شرح کو روکنے میں ناکام ہو گئی چھ ماہ سے مسلسل لائن لاسز میں اضافے کی وجہ سے کمپنی کو ڈیڑھ ارب روپے کا نقصان برداشت کرنا پڑاہے۔ کمپنی دستاویزات کے مطابق ماہ اپریل سے ستمبر تک کمپنی کے لا ئن لاسز میں مسلسل اضافہ ہواہے ماہ اپریل میں ایک فیصد اضافے کی وجہ سے 36 کروڑ روپے، ماہ مئی میں اعشاریہ چھ فیصد اضافے کی وجہ سے 21 کروڑ روپے جبکہ ماہ جون اور جولائی میں بھی لائن لاسز میں مسلسل اضافہ ریکارڈ کیا ہے اسی طرح ماہ اگست میں اعشاریہ تین فیصد اضافہ ریکارڈ کیا جس کی وجہ سے 22 کروڑ روپے کا نقصان جبکہ ستمبر میں بھی اعشاریہ تین فیصد لائن لاسز میں اضافہ ریکارڈ کیا گیا اور 32 کروڑ کا نقصان ہوا۔اس طرح کمپنی کو لائن لاسز کی مد میں مجموعی طور پر ڈیڑھ ارب روپے کا نقصان ہوا۔

بجلی چوری

مزید :

صفحہ آخر -