سردار خالد ابراہیم توہین عدالت کیس میں گرفتاری دینے پر آمادہ

سردار خالد ابراہیم توہین عدالت کیس میں گرفتاری دینے پر آمادہ

  

مظفرآباد(آن لائن)جموں وکشمیر پیپلز پارٹی کے سربراہ ،ممبر اسمبلی سردار خالد ابراہیم خان نے توہین عدالت کیس میں گرفتاری دینے پر آمادہ ہوگئے،کسی بھی عدالت سے ضمانت نہیں کراؤں گا،پولیس سپاہی وارنٹ گرفتاری لے کر آئے گا تو وردی کے احترام میں رضا کارانہ طور پر گرفتاری دے دوں گا،24مئی کو اسمبلی کی تقریر پر عدالتی نوٹس دنیا کی پارلیمانی تاریخ میں منفرد مثال ہے ،چیف جسٹس کے پاس از خود نوٹس کا اختیار ہی نہیں ،اسمبلی کی تقریر پر وضاحت طلب کرنا غیر آئینی ہے ،اگر توہین کا پہلو نکلتا بھی ہو تو اس کا باقاعدہ طریقہ کار موجود ہے ،اتوار کے روز مرکزی ایوان صحافت میں پرہجوم پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ممبر اسمبلی نے کہا کہ ہم آئین بنانے،چلانے اور اس کا احترام کرنے والے ہیں ،لیکن اداروں میں بیٹھنے والوں کو بھی اپنی حدود سے تجاوز نہیں کرنا چاہیے ،جس جج نے میرے خلاف نوٹس لیا وہی کیس سن رہاہے ،یہ بھی عدالتی تاریخ کا منفرد واقعہ ہے ،میرے خلاف اختیار کیا گیا سارا طریقہ کار غلط ہے ،اپنی انا کی تسکین کیلئے نوٹسز جاری کیے گئے ،ہم تو عدلیہ کے وقا ر کیلئے جنگ لڑ رہے ہیں لیکن بعض لوگ اپنے مفادات کیلئے آئین سے ہٹ کر فیصلے کر رہے ہیں،اسمبلی اور سپیکر نے میرے موقف کو درست قرار دیا ہے ۔

مزید :

علاقائی -