مضر صحت کھانا،9طالبات کو ہسپتال پہنچانے پرفوڈ پوائنٹ سیل، مقدمہ درج

مضر صحت کھانا،9طالبات کو ہسپتال پہنچانے پرفوڈ پوائنٹ سیل، مقدمہ درج

  

میاں چنوں228محسن وال (نمائندہ خصوصی 228 نمائندہ پاکستان)میاں چنوں میں غیر معیاری کھانے سے ڈی پی ایس کالج کی9طالبات کی حالت خراب ہوگئی متاثرہ طالبات تحصیل ہیڈ کواٹر ہسپتال میاں چنوں داخل ہیں ایک طالبہ تشویش ناک حالت کے پیش نظر نشتر ہسپتال ملتان ریفرکردی گئی(بقیہ نمبر9صفحہ12پر )

اسسٹنٹ کمشنر میاں چنوں چوہدری محمد ارشد نے محکمہ فوڈ کے ہمراہ کارروائی کرتے ہوئے فوڈ پوائنٹ سیل کردیا ہے ۔تفصیلات کے مطابق ڈی پی ایس کالج میاں چنوں میں بی ایس سی کی9طالبات علیزہ ،انیقہ وغیرہ نے غیر معیاری کھانا کھایا جس سے حالت بگڑ گئی جنہیں طبی مداد کے لئے تحصیل ہیڈکواٹر ہسپتال میاں چنوں پہنچا دیا گیا جبکہ ایک طالبہ کو تشویش ناک صورت حال کے پیش نظر نشتر ہسپتال ملتان ریفر کردیا جبکہ تین طالبہ ابھی تک پرائیویٹ کلینک پر زیر علاج ہیں طالبات کے مطابق کہ انہوں نے کالج کے باہر النور فوڈ پوائنٹ سے پراٹھا رول منگوا کر کھایا جس کے بعد ان کی طبعیت ناساز ہوگئی جبکہ کالج پرنسپل نے بتایا کہ کالج میں ایسے فوڈ پر پابندی ہے اور یہ واقعہ میرے علم میں نہیں ہے، اسسٹنٹ کمشنر میاں چنوں چوہدری محمد ارشد نیواقع کا علم ہونے پر محکمہ فوڈ اتھارٹی کے ہمراہ کارروائی کرتے ہوئے النور فوڈ پوائنٹ کو سیل کردیااور ہسپتال میں داخل طالبات کی عیادت کی تھانہ سٹی پولیس نے متاثرہ طالبات علیزہ،انیقہ دختران ملک محمد شوکت کی مدعیت میں النور فوڈ پوائنٹ کے مالک کے خلا ف زیر دفعہ337Jکے تحت مقدمہ درج کرکے ایک ملازم گرفتار کرلیا ہے۔

مضرصحت کھانا

مزید :

ملتان صفحہ آخر -