پولیس ملازمین کا سروس سٹرکچر بنانے اور ڈیوٹی کے اوقات کا ر مقرر کرنے کا مطالبہ

پولیس ملازمین کا سروس سٹرکچر بنانے اور ڈیوٹی کے اوقات کا ر مقرر کرنے کا ...

  

لاہور(لیاقت کھرل)پنجاب پولیس میں کی جانے والی اصلاحات میں پنجاب پولیس کی پونے دو لاکھ سے زائد فورس نے دیگر محکموں کی طرز پر سروس سٹرکچر بنانے اور ٹائم سکیل پرموشن سمیت ڈیوٹی کے اوقات کارمقرر کرنے کا مطالبہ کردیا ہے ۔ جس میں فوج کی طرز پر سہولیات کا بھی مطالبہ کیا گیا ہے۔ پنجاب پولیس کی فورس نے اس حوالے سے نئے سربراہ کو اپنے مطالبات پر مبنی چارٹر آف ڈیمانڈ پیش کردیا ہے۔ جس میں محکمہ پولیس کی پونے دو لاکھ سے زائد فورس نے اپنے مطالبات میں کہا ہے کہ کانسٹیبل اور اے ایس آئی کے علاوہ محکمہ پولیس میں بھرتی کا سلسلہ بند کیا جائے اور ان دونو ں رینک پر بھرتی کے علاوہ اے ایس پی یا انسپکٹر جیسے پولیس افسروں کو ڈائریکٹ بھرتی نہ کیا جائے اورمحکمہ کو سروس سٹرکچر بنایا جائے اور اس میں دیگر محکموں کی طرح ٹائم سکیل پروموشن کاطریقہ کار وضع کیا جائے جس میں بغیر کسی سفارش کے اہلکاروں کی اگلے گریڈ میں خود بخود ترقی ممکن ہوسکے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ نئے آئی جی پنجاب پولیس کو لاہور سمیت پنجاب بھر کے انسپکٹروں اور دیگر اہلکاروں کی جانب سے پیش کیے گئے چارٹر آف ڈیمانڈ میں یہ بھی مطالبہ کیا گیا ہے کہ اعلیٰ افسروں کی طرف سے توہین آمیز رویہ اور بغیر کسی وجہ کے سخت سے سخت سزا اور برخاستگی جیسے امور کا خاتمہ کیا جائے محکمہ میں فنڈز کے استعمال کا میکنزم تیار کیا جائے، یہ ڈیوٹی کے کنوینس الاؤنس دیا جائے اور اہلکاروں کو میڈیکل، تعلیم، ہاؤس رینٹ ، قیام و طعام کے الاؤنسز ، بچوں اور فیملی کے لیے سکول ،رہائش، ہسپتال وظائف جیسی سہولتیں فوج کے طرز پر لاگو کی جائیں۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ مطالبات میں اس بات کا بھی ذکر کیا گیا ہے سپریم کورٹ کے حکم پر آؤٹ آف ٹرن ختم ہونے والی پرموشن ایک درست عمل ہے تاہم تین سال پانچ سال اور پھر سات سال بعد پرموشن کا حق ہے رکھنے والے اہلکاروں اور انسپکٹرز کو اگلے گریڈ میں ترقی کا موقع دیا جائے۔ ٹائم سکیل پرموش اور سروس سٹرکچر واضع نہ ہونے پر ہر سال سینکڑوں اہلکار اور تھانیدار و انسپکٹر اپنی ترقی سے محروم رہتے ہیں اور اُسی سکیل پر ریٹائرہوجاتے ہیں۔ جس سے محکمہ کے اہلکاروں اور پولیس انسپکٹروں نے حوصلہ شکنی اور بددلی نے جنم لے رکھا ہے، ہفتے وار چھٹی سمیت پولیس میں سیاسی مداخلت ختم کی جائے اور میرٹ پر تقرر اور تبادلے کیے جائے۔محکمہ پولیس کی فورس کی جانب سے پیش کیے گئے چارٹر آف ڈیمانڈ آئی جی پنجاب جاوید امجد سلیمی نے ایس ایس پی عہدہ کے افسر انور کیھتران کی نگرانی میں ایک کمیٹی قائم کردی ہے اور اس کمیٹی سے پولیس اصلاحات کے حوالے سے کیے گئے اقدامات کی روشنی میں رائے طلب کرلی ہے۔

پولیس مطالبہ

مزید :

صفحہ اول -