سرکاری ہسپتالوں میں ناقص لفٹس سے متعلق کیس ،سپریم کورٹ کا کمپنی کیخلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم

سرکاری ہسپتالوں میں ناقص لفٹس سے متعلق کیس ،سپریم کورٹ کا کمپنی کیخلاف مقدمہ ...
سرکاری ہسپتالوں میں ناقص لفٹس سے متعلق کیس ،سپریم کورٹ کا کمپنی کیخلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سپریم کورٹ آف پاکستان نے لاہور کے سرکاری ہسپتالوں میں ناقص لفٹس سے متعلق کیس کی سماعت کے دوران لفٹ نصب کرنیوالی کمپنی کیخلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم دیدیا،چیف جسٹس ثاقب نثار نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ کام معیاری نہیں،قوم کیساتھ بددیانتی نہیں ہونے دیں گے،ناقص لفٹس کی مکمل تحقیقات کراناپڑیں گی۔

تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں بنچ نے لاہور کے سرکاری ہسپتالوں میں ناقص لفٹس سے متعلق کیس کی سماعت کی،لفٹ نصب کرنےوالی کمپنی کامالک سپریم کورٹ میں پیش ہو گیا،ایم ایس سروسزہسپتال نے کہا کہ لفٹ گری بھی تھی،رسک نہیں لے سکتے۔مالک نجی کمپنی نے کہا کہ عدالتی حکم پرلفٹس کی مرمت کردی تھی،لفٹ میں نقائص دورکردیئے،ہم کہیں بھاگ نہیں رہے۔

چیف جسٹس پاکستان نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ آپ کوکوئی بھاگنے بھی نہیں دےگا،محکمہ ورکس کے افرادساتھ ملے ہوئے ہیں،ہسپتال کے ایم ایس کہتے ہیں لفٹس خراب ہیں،کام معیاری نہیں،قوم کیساتھ بددیانتی نہیں ہونے دیں گے،آپ کی کمپنی پرپابندی لگاکرمقدمہ درج کرادیتے ہیں،چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ ناقص لفٹس کی مکمل تحقیقات کراناپڑیں گی،ایف آئی اے قانون کے مطابق مقدمہ درج کرے ،کمپنی کی آج کل سفارش نہیں چل رہی۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -