بہاولپور میں طالبہ کونشے کا عادی بنا کر اجتماعی زیادتی، افسوسناک خبرآگئی

بہاولپور میں طالبہ کونشے کا عادی بنا کر اجتماعی زیادتی، افسوسناک خبرآگئی
بہاولپور میں طالبہ کونشے کا عادی بنا کر اجتماعی زیادتی، افسوسناک خبرآگئی

  



بہاولپور (ویب ڈیسک) بہاول پور میں نویں جماعت کی طالبہ کو آئس ہیروئن کا عادی بنا کر مبینہ اجتماعی زیادتی کرنے والے گروہ کو پولیس ا ب تک گرفتار نہیں کرسکی ہے۔بہاول پور کے علاقے ضیاءالدین کالونی کی نویں جماعت کی طالبہ ٹیوشن کے لیے ماڈل ٹاﺅن سی میں واقع کوچنگ اکیڈمی جاتی تھی جہاں اسے آئس ہیروئن کے نشے کا عادی بنا کر کئی دنوں تک ا±س کے ساتھ اجتماعی کی جاتی رہی۔پولیس نے متاثرہ لڑکی کے والد کی مدعیت میں گینگ کے خلاف مقدمہ درج کرلیا ہے، مقدمہ میں ڈاکٹر زوہیب، لیڈی ڈاکٹر ثانیہ، مسمات ردا ندا، سردار عمیر، ساجن اور حماد پر مشتمل گینگ کے چھ ارکان کو نامزد کیا گیا ہے جبکہ ایک ملزم عبوری ضمانت حاصل کرنے کے بعد شامل تفتیش ہوگیا ہے۔پولیس ترجمان کا کہنا ہے کہ ملزمان روپوش ہیں جن کی گرفتاری کے لیے ٹیمیں کام کر رہی ہیں اور بہت جلد تمام ملزمان کو گرفتار کر لیا جائے گا۔پولیس کے مطابق 16 اکتوبر کو لڑکی کو آئس نشہ کے بہانے گھر سے بلا کر اغواءکیا گیا تھا اور دو دن تک ا±سے مبینہ اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنایا جاتا رہا۔

مزید : علاقائی /پنجاب /بہاول پور