’اب بیگم سے تعلق قائم کرنے سے پہلے شوہروں کو باقاعدہ اجازت لینا پڑے گی‘ مغربی ملک میں انوکھا قانون تیار

’اب بیگم سے تعلق قائم کرنے سے پہلے شوہروں کو باقاعدہ اجازت لینا پڑے گی‘ ...
’اب بیگم سے تعلق قائم کرنے سے پہلے شوہروں کو باقاعدہ اجازت لینا پڑے گی‘ مغربی ملک میں انوکھا قانون تیار

  



کنبرا(مانیٹرنگ ڈیسک) آسٹریلیا میں شوہروں کے لیے بیوی کے ساتھ تعلق قائم کرنے کے متعلق ایک ایسا قانون تیار کر لیا گیا کہ سن کر آدمی ورطہ¿ حیرت میں پڑ جائے۔ میل آن لائن کے مطابق اس نئے قانون کے لاگو ہونے کے بعد شوہروں کو اپنی بیویوں کے ساتھ ازدواجی تعلق قائم کرنے سے پہلے زبانی اجازت لینی ہو گی۔ جب تک بیوی اپنی زبان سے’ہاں‘ نہیں کہے گی، شوہر کو اس کے ساتھ ازدواجی تعلق قائم کرنے کی قانوناً اجازت نہیں ہو گی اور اسے بیوی کے ساتھ جنسی زیادتی تصور کیا جائے گا۔

رپورٹ کے مطابق قانون سازوں کا کہنا ہے کہ اس قانون کے لاگو ہونے کے بعد بیوی کا ازدواجی تعلق سے مزاحمت نہ کرنا کافی نہیں ہو گا۔ اگر کوئی بیوی اپنے شوہر کے ازدواجی تعلق قائم کرنے پر مزاحمت نہ کرے مگر اس نے زبان سے ہاں نہ کہا ہو تو اسے جنسی زیادتی ہی قرار دیا جائے گا اور شوہر کے خلاف قانونی کارروائی ہو گی۔ اس نئے قانون کو قانونی ماہرین نے ’وقت کا زیاں‘ قرار دے دیا ہے۔ آسٹریلوی وکیل الائنس گریگ بیرنز کا کہنا ہے کہ ”ہم جانتے ہیں کہ بیوی کے ساتھ ازدواجی تعلق اس طرح قائم نہیں ہوتا۔ بیوی کی زبانی ’ہاں‘ کو لازمی قرار دینا انتہائی غیرضروری عمل ہے۔“

مزید : ڈیلی بائیٹس