متحدہ عرب امارات میں مسلم لیگ ن کے ممبران کی تعیناتی صدر اور جنرل سیکرٹری کا استحقاق ہے : غلام مصطفی مغل

متحدہ عرب امارات میں مسلم لیگ ن کے ممبران کی تعیناتی صدر اور جنرل سیکرٹری کا ...
متحدہ عرب امارات میں مسلم لیگ ن کے ممبران کی تعیناتی صدر اور جنرل سیکرٹری کا استحقاق ہے : غلام مصطفی مغل

  

دبئی (طاہر منیر طاہر) متحدہ عرب امارات میں مسلم لیگ ن کے ممبران کی تعیناتی صدر اور جنرل سیکرٹری کا استحقاق ہے جس میں مسلم لیگ ن گلف کے عہدیداروں کی مداخلت بے جا ہے۔ امارات میں جن عہدوں پر نئے لوگوں کو تعینات کیا گیا ہے وہ عہدے اور جگہیں عرصہ دراز سے خالی تھیں۔ راس الخیمہ میں گزشتہ کئی سالوں سے کوئی صدر اور جنرل سیکرٹری نہیں تھا جبکہ ام القیوین میں صدر کا عہدہ گزشتہ چار سال سے غیر فعال تھا۔ ایسی جگہوں پر باہمی مشاورت سے عہدیداران کا اعلان کیا گیا ہے جو ہر لحاظ سے صحیح ہے اور کسی کو اس پر نکتہ چینی نہیں کرنی چاہیے۔ امارات میں مسلم لیگ ن محض ذاتی انا کی وجہ سے اندرونی خلفشار کا شکار ہے اور اس کے ذمہ دار وہ افراد ہیں جو باہم مل بیٹھ کر مسائل حل کرنے کے حق میں نہیں ہیں اور محض مخالفت برائے مخالفت کر کے حالات کو سنگین بنانے کی کوشش کررہے ہیں۔

ان خیالات کا اظہار مسلم لیگ ن متحدہ عرب امارات کے صدر غلام مصطفی مغل نے ایک پریس کانفرنس کے دوران کیا جس میں چیف کوآرڈینیٹر عبدالمجید مغل، ملک دوست محمد اعوان، شوکت بٹ، جمیل بنگیال، حاجی محمد نواز، راجہ ظہیر سملالوی ودیگر شامل تھے۔ پریس کانفرنس کے دوران غلام مصطفی مغل نے کہا کہ قول و فعل میں تضاد والے لوگ پارٹی کو بدنام کررہے ہیں ایسے لوگ نہیں چاہتے کہ یہاں مسلم لیگ ن پروان چڑھے بلکہ وہ ٹانگیں کھینچ کر مسلم لیگ ن کو سرنگوں کرنے کی کوشش کررہے ہیں جس میں وہ ہرگز کامیاب نہیں ہوسکتے کیونکہ امارات میں مسلم لیگ ن کو مخلص اور مضبوط مسلم لیگیوں کا اعتماد حاصل ہے۔

غلام مصطفی مغل نے کہا کہ کچھ لوگوں کا کہنا ہے کہ مسلم لیگ ن میں صرف ایک ہی علاقہ کے لوگوں کو نمائندگی دی جارہی ہے جبکہ ایسا بالکل نہیں ہے بلکہ مسلم لیگ ن یو اے ای ایسا گلدستہ ہے جس میں پاکستان بھر کے لوگوں کو شامل کیا گیا ہے جیسا کہ پی ایم ایل این ابوظہبی کے صدر چودھری محمد صدیق کا تعلق سیالکوٹ سے، العین کے صدر کا تعلق لاہور سے، شارجہ کے صدر ظہیر سملالوی کا تعلق راولپنڈی سے، دبئی کے چیئرمین شوکت بٹ کا تعلق گجرات سے، راس الخیمہ کے صدر راجہ ثاقب کا تعلق کلرسیداں سے، عجمان کے صدر عارف عامر منہاس کا تعلق چکوال سے، چودھری صغیر کا تعلق رحیم یار خان سے، امرلقیوین کے صدر سرفراز مغل کا تعلق کہوٹہ سے اور الفجیرہ کے صدر رمضان شان کا تعلق وہاڑی سے ہے۔ اسی طرح مرکزی نائب صدر عزیز اللہ خان کا تعلق نواب شاہ سے ہے۔ غلام مصطفی مغل نے کہا کہ شارجہ کے صدر کا عہدہ خالی تھا جس پر راجہ ظہیر سملالوی کو تعینات کیا گیا ہے جبکہ دبئی میں ایک صاحب حیثیت شوکت بٹ کو چیئرمین کا عہدہ دیا گیا ہے۔ چیف کوآرڈینیٹر عبدالمجید مغل نے کہا کہ کچھ لوگ کبھی ادھر ہوتے ہیں تو کبھی ادھر ہوتے ہیں جبکہ ادھر اُدھر جانے والے لوگوں کے دستخط ہمارے پاس موجود ہیں جن کی مشاورت سے نئے عہدیداران بنائے گئے۔ عبدالمجید مغل نے کہا کہ کبھی ادھر اور کبھی اُدھر جانے والے لوگ ہی مسلم لیگ ن میں نااتفاقی کا باعث بن رہے ہیں۔ 

پریس کانفرنس کے دوران پی ایم ایل این یو اے ای کے صدر غلام مصطفی مغل نے کہا کہ ہم آئین اور قانون کے مطابق اپنا حق استعمال کررہے ہیں اس پر کسی کو اعتراض نہیں ہونا چاہیے۔ ہمارا رابطہ بھی سینئر قیادت سے ہے جنہیں حالات و واقعات سے باخبر رکھا جارہا ہے۔ ہم مسلم لیگ ن گلف کی مداخلت برداشت نہیں کریں گے بلکہ کھلے دل سے انہیں دعوت دیتے ہیں کہ آئیں مل بیٹھیں اور باہمی مسائل باہمی مشاورت سے حل کریں تاکہ مسلم لیگ ن اتحاد کے ساتھ قائم رہ سکے۔

مزید :

عرب دنیا -تارکین پاکستان -