آئی جی سندھ کو کس نے اغواکیا? طلال چوہدری کا حیران کن بیان سامنے آگیا

آئی جی سندھ کو کس نے اغواکیا? طلال چوہدری کا حیران کن بیان سامنے آگیا
آئی جی سندھ کو کس نے اغواکیا? طلال چوہدری کا حیران کن بیان سامنے آگیا

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)مسلم لیگ ن کے رہنما طلال چوہدری نے کہا ہے کہ آئی جی سندھ کو اغواکرنے میں دو وفاقی اداروں کا ہاتھ ہے ۔اس بات کی تحقیقات ہونی چاہیے کہ اداروں نے خود ایسا کیا یا وزیراعظم کی ہدایت پر کیا۔ 

نجی ٹی وی چینل سماءنیوز کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے لیگی رہنما طلال چوہدری نے دعوی کیا ہے کہ آئی جی سندھ کو دو وفاقی اداروںنے اغوا کر کے کیپٹن (ر)صفدر کی گرفتاری عمل میں لائی گئی،جس کے سندھ حکومت کے پاس کافی ثبوت ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ اس بات کی تحقیقات ہونی چاہئیں کہ آیا مذکورہ اداروں نے وزیراعظم عمران خان کے حکم یا خود ہی ایسا کام کیا۔ انہوںنے کہا کہ عمران خان کٹھ پتلی ہے ، اس کو تو محض مہرے کے طور پر استعمال کیا جارہا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ہمیں پاکستان پیپلزپارٹی کی نیت پر کوئی شک نہیں ، وہ اس سارے معاملے میں بے بس نظر آئی۔ جس حکومت کی پولیس کا سربراہ اغوا ہوجائے ان کی نیت پرآپ کیسے شک کرسکتے ہیں۔ یہ سارا معاملہ پی ڈی ایم میں دراڑ پیدا کرنے کے لیے کیا گیا لیکن پی ڈی ایم کا اتحاد اتنا کمزور نہیں کہ اتنی آسانی سے ٹوٹ جائے۔ 

فیاض الحسن کے مریم اور کیپٹن (ر)صفدرکے علیحدہ علیحدہ کمرے میں ہونے کے دعوی پر سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ میں اس شخص کو جواب دینا مناسب نہیں سمجھتا ، اگر ہم ذاتیات پر اتر آئے تو معاملہ کسی اور طرف چلا جائے گا۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ کوئٹہ کا جلسہ ضرور ہوگا،ہمیں آئین جلسوں کی اجازت دیتاہے ، سکیورٹی تھریٹ ہمیں نہیں روک سکتے،سکیورٹی دینا انتظامیہ کی ذمہ داری ہے۔ 

مزید :

قومی -