وفاقی وزیر عمر ایوب پر پیسے لے کر سی ای او پیسکو تعینات کرانے کا الزام لگ گیا

وفاقی وزیر عمر ایوب پر پیسے لے کر سی ای او پیسکو تعینات کرانے کا الزام لگ گیا
وفاقی وزیر عمر ایوب پر پیسے لے کر سی ای او پیسکو تعینات کرانے کا الزام لگ گیا

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن )پاکستان پیپلز پارٹی کے سینیٹر بہرامند تنگی نے وفاقی وزیر توانائی عمر ایوب پر پیسے لے کر چیف ایگزیکٹو آفیسر پیسکو تعینات کرنے کا الزام لگادیا۔مقامی اخبار ”روز نامہ جنگ“میں شائع ہونے والی رپورٹ کے مطابق سینیٹ اجلاس میں سینیٹر بہرامند خان تنگی، عمر ایوب اور علی محمد خان کے درمیان سخت جملوں کا تبادلہ ہوا۔بہرامند تنگی نے کہا کہ جس چیف ایگزیکٹو پیسکو کو انہوں نے لگایا اس نے کتنے پیسے دیے؟ جبکہ پیسے لے کر پیسکو سی ای او کو لگایا تو علاقے میں بجلی کے میٹر بھی لگوا دیں۔وفاقی وزیر عمر ایوب نے سینیٹر بہرامند تنگی کو جواب دیتے ہوئے کہا کہ یہ جھوٹ بول رہے ہیں، بہرامند تنگی نے تو میٹر کے معاملے پر میرا شکریہ ادا کیا تھا اور انہوں نے میرے آفس ٰآ کر کہا آپ لوگ بہت اچھا کام کر رہے ہیں۔

مزید :

قومی -