جنرل باجوہ نے فٹیف شرائط پر عملدرآمد یقینی بنانے میں کلیدی کردار ادا کیا

      جنرل باجوہ نے فٹیف شرائط پر عملدرآمد یقینی بنانے میں کلیدی کردار ادا ...

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)فیٹف کی گرے لسٹ سے پاکستان کا نام نکلنا تمام پاکستانی اداروں کی بڑی کامیابی ہے اور آرمی چیف جنرل قمر جاویدباجوہ نے فیٹف شرائط پرعملدرآمد یقینی بنانے میں کلیدی کردارادا کیا۔فیٹف شرائط پرعملدرآمد کیلئے آرمی چیف نے جی ایچ کیو میں سپیشل سیل قائم کیا اور میجر جنرل کی سربراہی میں سپیشل سیل نے وزارتوں اور ایجنسیوں کے درمیان روابط کانظام بنایا۔ سپیشل سیل نے ہر ایک نکتے پر عمل درآمد کو یقینی بنایا اور منی لانڈرنگ، ٹیرر فنانسنگ اور بھتہ خوری پرمؤثرلائحہ عمل سے قابو پایا۔ سپیشل سیل نے اغوابرائے تاوان،ٹارگٹ کلنگ پرمؤثرلائحہ عمل سے قابو پایا اور دنیا پر ثابت کردیا ہم ذمہ دار ریاست اور قوم ہیں۔بھارت نے پاکستان کا نام فیٹف سے نکلنے میں بہت مشکلات کھڑی کیں۔ذرائع کے مطابق پاکستان میں منی لانڈرنگ کے 800 سے زائد کیسز رپورٹ ہوئے، ان کیسز کی گزشتہ 13 مہینوں کے دوران تحقیقات مکمل کی گئیں اور58 ارب کے اثاثے ضبط کیے گئے۔ذرائع نے بتایا کہ پاکستان نے 26ہزار630 بین الاقوامی درخواستوں پر کارروائی کی، ایف بی آر نے 1700 سے زائد نامزد غیرمالیاتی کاروبار اور پیشوں کی نگرانی کی اور 35 کروڑ روپے کے جرمانے عائد کیے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ ایف بی آر نے رئیل اسٹیٹ سیکٹر کو تعمیل کے دائرے میں شامل کیا، ایس ای سی پی نے قانونی تعمیل میں 2 ارب روپے سے زائد کے جرمانے عائد کیے۔دوسری جانب وزیراعظم شہبازشریف نے آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ کی تعریف کی اور کہا کہ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے فیٹف معاملے میں کلیدی کردار ادا کیا۔

 جنر ل باجوہ 

مزید :

صفحہ اول -