باغبان بارش کے پانی کی نکاسی کا خصوصی انتظام کریں،زرعی ماہرین

باغبان بارش کے پانی کی نکاسی کا خصوصی انتظام کریں،زرعی ماہرین

  

راولپنڈی (اے پی پی )نظامت زرعی اطلاعات پنجاب نے باغبانوں کو ہدایت کی ہے کہ وہ ترشاوہ باغات میں سیلابی پانی کو اکٹھا نہ ہونے دیں کیونکہ پودوں کی جڑیں آکسیجن سے محروم ہو کر مر سکتی ہیں اور پودے سوکھنے کا احتمال بڑھ جاتا ہے لہٰذا بذریعہ پیٹر انجن یا باغ کے نشیب کی طرف کھال نکال کر یا کوئی بھی آسان طریقہ اپناتے ہوئے پانی کو باہر نکال دیں۔

 ترجمان نے مزید کہا کہ باغات میں بارشوں کا پانی بھی زیادہ دیر تک کھڑا نہ رہنے دیں کیونکہ 24 تا 36 گھنٹے جہاں بھی پانی کھڑا رہے پودوں کی جڑوں کو نقصان ہونے کے تناظر میں بھی ترشاوہ باغات تیزی سے انحطاط پذیر ہو سکتے ہیں۔ فضائی نمی بڑھ جانے کی صورت میں سٹرس سکیب، میلا نوز اور سٹرس کینکر کا حملہ ہو سکتا ہے، احتیاطی تدابیر نہ کی جانے کی صورت میں یہ بیماریاں شدت اختیار کر لیتی ہیں لہٰذا ان بیماریوں کے تدارک کے لئے محکمانہ سفارشات کے مطابق سپرے کیا جائے ۔

(tca/mik/mrn 1133:14)

مزید :

کامرس -