مغربی کنارا ٗ اسرائیلی فوج نے ایک گاؤں کا محاصرہ کرلیا

مغربی کنارا ٗ اسرائیلی فوج نے ایک گاؤں کا محاصرہ کرلیا

جنین (اے این این)فلسطین کے مقبوضہ مغربی کنارے کے شمالی شہر جنین کے ایک قصبے پر اسرائیلی فوج نے گذشتہ روز دھاوا بولا اور کئی گھنٹے تک اس کا محاصرہ جاری رکھا۔عینی شاہدین نے مرکز اطلاعات فلسطین کو بتایا کہ ہفتے کو علی الصباح یہودی فوجیوں کی بڑی تعداد نے فوجی گاڑیوں کے ساتھ یعبد قصبے کا محاصرہ کیا اور قصبے کے تمام داخلی اور خارجی راستوں پر ناکے لگا کر انہیں بند کردیا گیا جس کے نتیجے میں شہریوں کو اپنے گھروں سے اندر باہر آنے جانے میں بھی شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔مقامی ذرائع نے بتایا کہ محاصرہ اچانک اس وقت کیا گیا جب مقامی شہری دفاتر اور بچے اسکولوں کو جانے کی تیاری کررہے تھے۔

صہیونی فوجیوں نے نہ صرف ناکے لگا کر شہریوں کی جامہ تلاشی کا ظالمانہ سلسلہ شروع کردیا بلکہ شہریوں کو خوف زدہ کرنے کے لیے بھاری آواز پیدا کرنے والے بموں کے بھی دھماکے کیے۔مقامی شہریوں کا کہنا ہے کہ پچھلے ایک ہفتے سے اسرائیلی فوج نے یعبد قصبے کے کاشت کاروں کو ملدو دوتان نامی یہودی کالونی کے قریب اپنے کھیتوں میں کام سے روک دیا گیا ہے۔

مزید : عالمی منظر