قرآن کریم کا ہر لفظ بامعنی اور طاقتور ہے، علامہ اسلم صدیق

قرآن کریم کا ہر لفظ بامعنی اور طاقتور ہے، علامہ اسلم صدیق

لاہور (پ ر) ممتاز مذہبی سکالر مفسر قرآن پروفیسر ڈاکٹر علامہ محمد اسلم صدیقی نے درس ہدایت کی نشست میں ”سورہ¿ السجدہ“ کی آیات 32کا خلاصہ بیان کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ مکی سورة ہے جب یہ نازل ہوئی تو آپ غار حرا میں تھے۔ اس وقت مشرکین سخت مخالفین میں تھے۔ قرآن کریم عملی کتاب ہے یہ کتاب دلیل بھی ہے جو ہمیں سیدھا راستہ بتاتی ہے، جبکہ قرآن کریم کے الفاظ بھی وسیع ہیں اس کا ہر لفظ بامعنی اور طاقتور ہے انہوں نے کہا کہ اللہ تعالیٰ وہ ہے جس نے سات آسمان اور سات زمینیں بنائیں قرآن کتابِ مبین ہے قرآن کریم اللہ کا کلام ہے۔ فرمایا کہ تم قرآن جیسی کوئی ایک سورة لاﺅ۔ اگر ایسا نہیں تو پھر تم اس کی مخالفت کیوں کرتے ہو، فرمایا کہ یہ زبان مجھے حضرت جبرائیل علیہ السلام نے سکھائی۔ قرآن نصیحت ہے یہ کتاب اللہ تعالیٰ نے اپنے آخری نبی پر اتاری جس کا اسلوب1400سال تک نہیں بدلا اور نہ ہی قیامت تک بدلے گا انہوں نے کہا آپ نے اپنی پوری زندگی کبھی جھوٹ نہیں بولا، خود بھی سچ بولتے اور دوسروں کو بھی سچ بولنے کی تلقین کرتے۔ یہ کتاب رب العالمین کی ہے اس لئے تم اس کو قبول کرو اس پر عمل کرو ہمیشہ فلاح پاﺅ گے یہ اللہ کی کتاب ہے یہ کتابِ اللہ کا کلام ہے یہی حق ہے جو تیرے رب نے تجھے بتایا ہے، انہوں نے کہا کہ اللہ صرف خائق ہی نہیں ہے بلکہ وہ پوری کائنات کا حاکم ہے، اس نے کائنات کو پیدا کیا، زمین اور آسمان بنائیں، اُسی نے پوری کائنات کی باگ ڈور سنبھالی ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4