بلوچستان کی تین جیلوں میں لگائے گئے موبائل فون جیمرز جواب دے گئے

بلوچستان کی تین جیلوں میں لگائے گئے موبائل فون جیمرز جواب دے گئے
 بلوچستان کی تین جیلوں میں لگائے گئے موبائل فون جیمرز جواب دے گئے

  

 کوئٹہ(مانیٹرنگ ڈیسک)بلوچستان کی تین جیلوں میں لگائے گئے موبائل فون جیمرز جواب دے گئے ہیں ، یہ موبائل فون جیمرز دو سال قبل ہی ستر لاکھ روپے کی لاگت سے لگائے گئے تھے۔محکمہ جیل کے ذرائع کے مطابق دو سال قبل بلوچستان کی 11 جیلوں میں 70 لاکھ روپے کی لاگت سے موبائل فون جیمرز لگائے جانے کاکام شروع ہوا تھا اور اس رقم سے صرف کوئٹہ ،مچھ اور نوشکی جیل میں جیمرز کی تنصیب ہوسکی۔ کوئٹہ اور نوشکی جیل کے جیمرز جلد جواب دے گئے تومچھ میں لگائے جیمرز کوئٹہ جیل منتقل کردئیے گئے لیکن یہ جیمرز بھی ناکارہ نکلے ، دو موبائل جیمرز میں سگنل جام کرنے کی صلاحیت ہی نہیں ہے اور لائٹ جانے پر وہ کام ہی چھوڑ دیتے ہیں۔ صوبے کی جیلوں میں موبائل فون جیمرز نہ ہونے کی وجہ سے قیدیوں میں موبائل استعمال میں اضافہ ہوگیا ہے اور کوئٹہ جیل میں چندروز کے دوران دو درجن موبائل فون برآمد کئے جاچکے ہیں۔ ذرائع کے مطابق ڈسٹرکٹ جیل کوئٹہ ،سنٹرل جیل مچھ ،سنٹرل جیل خضدار اور سنٹرل جیل گڈانی کو سیکیورٹی کے لحاظ سے حساس ترین جیل قرار دیا گیا ہے۔

مزید :

کوئٹہ -