بیوی سے نیکی کرنے والا ارب پتی نئی مشکل میں گرفتار

بیوی سے نیکی کرنے والا ارب پتی نئی مشکل میں گرفتار
بیوی سے نیکی کرنے والا ارب پتی نئی مشکل میں گرفتار

  

مانچسٹر (نیوز ڈیسک) برطانیہ کے ایک ارب  پتی شخص پر فلاحی کاموں کا ایسا جنون سوار ہوا کہ اس نے ساری دولت ہی فلاحی کاموں کیلئے وقف کردی جس پر اس کی بیوی نے ناراض ہوکر علیحدگی اختیار کرلی ہے۔

برائن برنی نامی شخص کی پیدائش ایک غریب گھرانے میں ہوئی اور اس نے بچپن سے ہی محنت مزدوری شروع کردی تھی۔ تعمیراتی شعبے اور ملازمتیں فراہم کرنے والی کمپنی قائم کرنے کے بعد اس نے بے پناہ دولت کمائی لیکن ایک دہائی قبل جب اس کی بیوی بریسٹ کینسر کا شکار ہوگئی تو اس کی توجہ دنیا داری سے ہٹ گئی اور وہ فلاحی کاموں میں دلچسپی لینے لگا۔ ستر سالہ برائن نے اپنا 16 ملین پاﺅنڈ (تقریباً 2 ارب 70 کروڑ روپے) کا محل فروخت کرکے غریب مریضوں کو ہسپتال لے جانے کیلئے گاڑیاں خریدیں اور اسی طرح دیگر کئی فلاحی منصوبے بھی شروع کردئیے۔ دریں اثناءاس کی بیوی کا علاج جاری رہا اور وہ مکمل طور ر صحتیاب بھی ہوگئی۔

برائن کی فلاحی کاموں سے رغبت اور بھی بڑھ گئی اور وہ تمام اثاثہ جات بیچ کر ایک چھوٹے سے کرائے کے گھر میں منتقل ہوگیا مسز برائن بالآخر شوہر کی دریا دلی سے سخت پریشان ہوگئی اور اپنے اور اپنے تین بچوں کے مستقبل سے پریشان ہوکر اس نے واویلا شروع کردیا لیکن برائن نے اپنی سخاوت جاری رکھتے ہوئے اپنی فلاحی تنظیم کے دفتر کے اوپر ایک چھوٹے سے کمرے میں رہائش اختیار کرلی ہے اور بیوی سے بھی علیحدگی اختیار کرلی ہے۔ اس کا کہنا ہے کہ وہ صرف پنشن پر گزارا کرتا ہے اور یہ رقم بھی اس کی وفات کے بعد اس کے فلاحی ادارے کو ملنا شروع ہوجائے گی۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -