ملک میں رویت ہلال کمیٹی موجود، پاکستانیوں کا سعودی عرب کے ساتھ عیدیں منانا شرعاً جائز نہیں: مفتی سردار

ملک میں رویت ہلال کمیٹی موجود، پاکستانیوں کا سعودی عرب کے ساتھ عیدیں منانا ...
ملک میں رویت ہلال کمیٹی موجود، پاکستانیوں کا سعودی عرب کے ساتھ عیدیں منانا شرعاً جائز نہیں: مفتی سردار

  



اسلام آباد (ویب ڈیسک) مرکزی رویت ہلال کمیٹی کے ہوتے ہوئے پاکستان میں سعودی عرب کے ساتھ صوم وعیدین منانا شرعاً جائز نہیں، علماءدیوبند اور مذہب حنفی کے مطابق ملک کی رویت ہلال کمیٹی معتبر اور شرعی ہے۔دارالعلوم اکوڑہ خٹک کے شیخ الحدیث مفتی محمد فرید مرحوم کے تصنیف کردہ فتاویٰ فریدیہ کے مطابق سعودی عرب پاکستان سے بلدبعید ہے لہٰذا ان کے ساتھ صوم و عیدین منانا شرعی لحاظ سے درست نہیں قومی یکجہتی اور اتفاق کی خاطر ہندو پاک کے 42 علماءکی تجویز کردہ رویت حلال کمیٹی اس معاملے سب سے معتبر ہے۔ ان خیالات کا اظہار دارالعلوم عربیہ ٹل کے شیخ الحدیث اور خطیب جامع مسجد گنبد علامہ مفتی محمد سردار نے ایک بیان میں کیا۔

انہوں نے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ بعض علماءملک و قوم کو دو حصوں میں بانٹ رہے ہیں حالانکہ تمام تر مذہبی مسائل پر وہ اپنے علماءاکرام کی پیروی کرتے ہیں تاہم رمضان اور عیدین کے موقعوں پر وہ سعودی عرب کے ساتھ عید مناتے ہے جو کہ شرعی لحاظ سے بالکل درست نہیں کیونکہ علماءکرام کی تجویز کردہ اور حاکم وقت کی طرف سے مقرر کردہ رویت ہلال کمیٹی سب سے افضل اور معتبر ہے اور شرعاً ان کی پاسداری بھی ضروری ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ جس طرح سعدی عرب کے دستاویزات پاکستان اور دوسرے ملکوں میں کارآمد نہیں اس طرح ان کے ساتھ صوم و عیدین بھی منانا شرعی لحاظ سے جائز نہیں اور ان کے اعلان کے مطابق عید منانے سے ان کی قربانیاں بھی ضائع ہونے کا خدشہ ہے۔ انہوں نے صوبہ بھر کے عوام سے اپیل کتے ہوئے کہا کہ وہ مرکزی رویت ہلال کمیٹی کے اعلان کے مطابق 25 ستمبر بروز جمعہ کو عید قربان منائیں اور شریعت محمد ی کی پاسداری کرکے شرعی احکامات کی صحیح طور پر ادائیگی کریں تاکہ گناہ کے مرتکب ہونے سے بچا جاسکے۔

مزید : اسلام آباد


loading...