بھارت نے راوی میں پھر پانی چھوڑ دیا ،سیلاب کی وارننگ جاری ،سرکاری محکموں کی چھٹیاں منسوخ

بھارت نے راوی میں پھر پانی چھوڑ دیا ،سیلاب کی وارننگ جاری ،سرکاری محکموں کی ...

  



لاہور( اقبال بھٹی)بھارت نے راوی میں پھر پانی چھوڑ دیا سیلابی وارننگ جاری کردی گئی محکمہ انہار کو فی الفور حفاظتی اقدامات کرنے کے لئے ہدایات جاری کردی گئیں ۔سیلان کی ممکنہ صورت حال کے پیش نظر شہری پریشان ہو گئے ۔تفصیلات کے مطابق بھارت کی جانب سے دریائے راوی میں پانی چھوڑے جانے کے بعد دریائے راوی میں سیلاب کی وارننگ جاری کردی گئی ہے اور محکمہ انہار نے اپنے تمام عملہ کو فوری طور پر سیلابی علاقوں میں پہنچ کر بنیادی انتظامات کرنے کے احکامات بھی جاری کردئیے ہیں جبکہ اس وارننگ کے باعث دریائے راوی کے ارد گرد واقع آبادیوں میں تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے عید کے موقع پر سیلابی صورت حال کے باعث لوگ نہائت پریشان ہیں اور اگر سیلاب آتا ہے تو دریائے راوی کے ارد گرد سینکڑوں ایکڑ اراضی کے زیر آب آنے کا بھی خطرہ ہے خاص طور پر کمالیہ کے ارد گرد بھی سینکڑوں ایکڑ آراضی زیر آب آنے کا خطرہ ہے تاہم اس بارے میں محکمہ انہار کا کہنا ہے کہ تمام انتظامات احتیاطی طور پر کئے جا رہے ہیں ۔ذرائع نے یہ بھی بتایا ہے کہ ممکنہ سیلاب کے پیش نظر تمام نہروں بیراجوں اور ہیڈ ورکس پر سنئیر انجئیر تعینات کئے جا رہے ہیں محکمہ آبپاشی پنجاب نے موجودہ موسمی صورت حال کی وجہ اور فلڈ وارننگ کے پیش نظر نہری اثاثہ جات کی متواتر حفاظت کے لئے نہروں بیراجوں اور ہیڈ ورکس پر سنئیر انجئیر تعینات کئے جا رہے ہیں جو آبی گذر گاہوں پر پانی کے بہاؤ پر مسلسل نظر رکھیں گے ۔محکمہ آبپاشی کے ترجمان کے مطابق آئندہ چند روز کی موسمی صورت حال کو مد نظر رکھتے ہوئے محکمہ سیلابی صورت حال سے بنرد آزما ہونے کے لئے فیلڈ میں تمام عملے کو الرٹ کردیا گیا ہے جبکہ نہروں و آبی گذر گاہوں کے حفاظتی پشتوں کی نگرانی کی مسلسل ہدایات بھی جاری کردی گئی ہیں ۔اس سلسلہ میں سیکرٹری آبپاشی کیپٹن (ڑ) سیف انجم نے ممکنہ فلڈ کے حوالے سے کئے جانے والے اقدامات کا جائزہ لینے کے لئے ہنگامی دوروں کا آغاز کردیا ہے اسی طرح ذونل چیف انجئیرز نے بھی اپنے زوننز میں واقع نہروں اور پشتوں کی مانیٹرنگ کے لئے عملہ کو الرٹ رہنے کی ہدایات جاری کردی ہیں۔ دوسری طرفپراونشل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی کے ڈائریکٹر جنرل جواد اکرم نے کہا ہے کہ موسمیاتی تبدیلی کے باعث آئندہ چند روز نہایت اہم ہیں ۔ اس دوران بارشوں کا سلسلہ تیز ہونے کا امکان ہے ۔ تمام اضلاع کی انتظامیہ کو کسی بھی صورت حال سے نمٹنے کے لئے تیار رہنے کے احکامات صادر کر دئیے گئے ہیں ۔ بہترین منصوبہ بندی اور مربوط حکمت عملی سے سیلاب جیسی قدرتی آفت سے موثر انداز میں ہی نمٹا جا سکتا ہے جبکہ صوبہ بھر میں سرکاری محکموں کی چھٹیاں منسوخ کر دی گئی ہیں ۔ اس امر کا اظہار انہوں نے محکمانہ اجلاس سے خطاب کے دوران کیا ۔ انہوں نے کہا کہ تمام ڈی سی اوز کو حفاظتی بندوں اور پشتوں کا باقاعدگی سے معائنہ کرنے او رپانی کے اتار چڑھاؤ بارے مانیٹرنگ کی ہدایات کر دی گئی ہیں ۔ تمام اضلاع کے فلڈ کنٹرول روم کو فعال کر کے رابطہ ماسٹر کنٹرول روم جو کہ پی ڈی ایم اے میں قائم ہے سے کر دیا گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ کسی بھی ممکنہ بارشوں کے پیش نظر شہروں میں نکاسی اب کے لئے فوری اور تیز تر انتظامات بارے ہدایت بھی جاری کر دی گئی ہیں ۔ ا نہوں نے کہا کہ ویئر ہاؤس میں 10 ہزار خیمے اور 20 ہزار فوڈ ہیمپرز کا سٹاک موجود ہے جبکہ 5500 خیمے پہلے ہی تقسیم کردئیے گئے ہیں ۔

مزید : صفحہ اول


loading...