ایک دفعہ پھر چاندنواب خبر بن گئے، سٹیشن انتظامیہ نے کوریج کے دوران تشدد کا نشانہ بنا ڈالا

ایک دفعہ پھر چاندنواب خبر بن گئے، سٹیشن انتظامیہ نے کوریج کے دوران تشدد کا ...
ایک دفعہ پھر چاندنواب خبر بن گئے، سٹیشن انتظامیہ نے کوریج کے دوران تشدد کا نشانہ بنا ڈالا

  



کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک)خبریں دینے والے چاند نواب میڈیا میں واپسی کے بعدخود ہی خبر بن گئے،کراچی کے کینٹ سٹیشن کی ریلوے پولیس نے کوریج کے دوران سینئر صحافی چاندنواب کوبدترین تشددکا نشانہ بنا ڈالا ۔

نجی ٹی وی چینل 92 نیوز سے منسلک ہونے والے سینئر صحافی چاند نواب کو اس وقت تشدد کا نشانہ بنایا گیا جب وہ کراچی سے لاہور جانے والی پہلی عید سپیشل ٹرین کی کوریج کیلئے ریلوے سٹیشن گئے تھے۔ چاند نواب جب ریلوے سٹیشن پہنچے توسٹیشن پر موجود لوگوں نے چاند نواب کے سامنے ریلوے انتظامیہ کی نااہلی اور بلیک میلنگ کی شکایت کرنا شروع کردی جس پر وہ لوگوں کے تاثرات ریکارڈ کرنے لگے توسٹیشن ماسٹر اور ریلوے پولیس نے چاند نواب پر تشددشروع کردیاجس کی زد میں چاندنواب کے ساتھ موجود کیمرہ مین اور ڈی ایس این جی انجینئربھی آگئے۔

چاندنواب کے مطابق ریلوے اہلکار ٹکٹوں کو بلیک کرکے 600 روپے کا ٹکٹ 2400 روپے میں فروخت کررہے تھے انتظامیہ کا راز فاش ہونے پر انہیں تشدد کانشانہ بنایا گیا ۔ واضح رہے کہ کچھ سال پہلے چاند نواب کی ریلوے سٹیشن پر کوریج کی ویڈیو لیک ہوگئی تھی جس میں وہ کوریج میں رکاوٹ کا باعث بننے والے لوگوں سے جھگڑتے نظرآرہے تھے، ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہونے سے چاند نواب کو خوب شہر ت ملی لیکن ان کی شہرت کو دوام اس وقت ملا جب بالی ووڈ میں بجرنگی بھائی جان فلم بنی جس میں چاند نواب کے کردار کو بھی شامل کیا گیا تھا۔ فلم میں چاند نواب کا کردار نوازالدین صدیقی نے اداکیاتھا۔

مزید : کراچی /اہم خبریں