ڈاکٹر عاصم سے اہل خانہ کی ملاقات ،ہسپتال سے منتقل نہ کرنے کا مطالبہ

ڈاکٹر عاصم سے اہل خانہ کی ملاقات ،ہسپتال سے منتقل نہ کرنے کا مطالبہ
ڈاکٹر عاصم سے اہل خانہ کی ملاقات ،ہسپتال سے منتقل نہ کرنے کا مطالبہ

  



کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک )پیپلز پارٹی کے رہنما ڈاکٹر عاصم کےوارڈ کو آئی سی یو میں تبدیل کر دیا گیا ہے جہاں ان کے اہلخانہ نے ان سے ملاقات کی ہے ۔ان کی اہلیہ زرین حسین کا کہنا ہے کہ ان کی حالت ٹھیک نہیں ہے انہیں کہیں اور منتقل نہ کیا جائے اگر ان کو کہیں اور منتقل کیا گیا تو حالت بگڑ سکتی ہے ۔اہل خانہ کا کہناتھا کہ انہیں ہائی بلڈ پریشر اور شوگر کا مرض لاحق ہے لیکن انہیں دل کی تکلیف پہلی مرتبہ ہوئی ہے ۔دریں اثناءہسپتال انتطامیہ کا کہنا ہے کہ ان کی ای سی جی اب نارمل ہے ۔قبل ازیں وزیر اعلیٰ سندھ قائم علی شاہ قومی ادراہ امراض قلب پہنچ گئے تھے جہاں انہوں نے ڈاکٹر عاصم کی عیادت کی تھی۔واضح رہے کہ پیپلز پارٹی کے رہنما ڈاکٹر عاصم کو دل کا شدید دورہ پڑنے پر کارڈیو منتقل کیا گیا تھا جہاں انہیں انتہائی نگہداشت کے وارڈ میںرکھا گیاہے عاصم کو رات گئے دل کا دورہوااورخصوصی ٹیم نے ان کا طبی معائنہ کیا ان کے طبی معائنے کیلئے تین رکنی بورڈ تشکیل دیدیا گیاہے ۔خیال رہے کہ ڈاکٹر عاصم سابق صدر آصف زرداری کے قریبی ساتھیوں میں شامل ہیں اور 90روزہ جسمانی ریمانڈ پر رینجرز کی تحویل میں ہیں ۔ڈاکٹر عاصم پر دہشتگردوں کی مالی معاونت ،زمینوں پر قبضے اور بدعنوانی کے الزمات ہیں ۔

مزید : کراچی /اہم خبریں


loading...