ہائی کورٹ :مرحلہ وار بلدیاتی انتخابات کے خلاف درخواست مسترد

ہائی کورٹ :مرحلہ وار بلدیاتی انتخابات کے خلاف درخواست مسترد
 ہائی کورٹ :مرحلہ وار بلدیاتی انتخابات کے خلاف درخواست مسترد

  



لاہور (نامہ نگار خصوصی)لاہور ہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس اعجازالاحسن نے پنجاب میں مر حلہ وار بلدیاتی انتخابات کرانے کے خلاف دائر درخواستیں مسترد کردی ہیں۔فاضل جج نے اس سلسلے میں الیکشن کمشن کے موقف سے اتفاق کرتے ہوئے قرار دیا کہ مرحلہ وار انتخابات کے انعقاد پر کوئی آئینی قدغن نہیں ہے ۔عدالتی سماعت کے موقع پر درخواست گزار پاکستان جسٹس پارٹی کے سربراہ ملک منصف اعوان نے موقف اختیار کیا کہ الیکشن کمیشن نے مرحلہ وار بلدیاتی انتخاب کے پہلے مرحلے کا شیڈول بدنیتی کی بنیاد پر جاری کیا۔آئین اور عوامی نمائندگی ایکٹ میں مرحلہ وار انتخابات کرانے کا کوئی جواز موجود نہیں ہے۔الیکشن کمیشن کی جانب سے من پسند حلقوں اور اضلاع کا انتخابی شیڈول جاری کر دیا گیا ہے جو آئین کے منافی ہے۔انہوں نے کہاکہ الیکشن کمیشن نے ایک ہی ڈویڑن کے ایسے اضلاع کا انتخابی شیڈول جاری کیا ہے جہاں سے حکومتی جماعت کے ممبران اسمبلی منتخب ہوئے ہیں مگر اسی ڈویڑن کے ایسے اضلاع کا انتخابی شیڈول جاری نہیں کیا جہاں سے اپوزیشن کے اراکین اسمبلی منتخب ہوئے ہیں۔ دوران سماعت الیکشن کمیشن کی جانب سے سرکاری وکیل نے عدالت کو بتایا گیا کہ مرحلہ وار انتخابات دھاندلی کی روک تھام اورانتظامات کو بہتر بنانے کے لئے کئے جا رہے ہیں الیکشن کمیشن کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ خیبرپختونخواہ میں ایک ہی وقت میں بلدیاتی انتخابات کروائے تھے جس سے امن وامان کے مسائل پیدا ہوئے جبکہ ایک ہی وقت میں بلدیاتی الیکشن کروانے کے لیے الیکشن کمیشن کے پاس عملہ بھی موجود نہیں۔جس پر عدالت نے فریقین کے وکلاءکے دلائل سننے کے بعد درخواست مسترد کردی ۔

مزید : لاہور


loading...