سپریم کورٹ نے وزرائے اعلیٰ کو کوٹہ سسٹم کے تحت اسسٹنٹ کمشنرزبھرتی کرنے سے روک دیا

سپریم کورٹ نے وزرائے اعلیٰ کو کوٹہ سسٹم کے تحت اسسٹنٹ کمشنرزبھرتی کرنے سے ...
سپریم کورٹ نے وزرائے اعلیٰ کو کوٹہ سسٹم کے تحت اسسٹنٹ کمشنرزبھرتی کرنے سے روک دیا

  


اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک ) سپریم کورٹ نے وزرائے اعلیٰ کو کوٹہ سسٹم کے تحت اسسٹنٹ کمشنرز کی بھرتی سے روک دیا ۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق جسٹس امیر ہانی مسلم کی سربراہی میں فل بینچ نے کیس کی سماعت کرتے ہوئے وزرائے اعلیٰ کو براہ راست اسسٹنٹ کمشنرزبھرتی کرنے سے روکتے ہوئے وزرائے اعلیٰ کے براہ راست بھرتی کرنے کے اختیارات معطل کر دیے ۔

عمران خان کیلئے بری خبر آگئی ، جلسہ کرنے سے روک دیا گیا 

کیس کی سماعت کے دوران سپریم کورٹ نے وزرائے اعلیٰ کو اسسٹنٹ کمشنرز کی بھرتی روکنے کا حکم بھی سنادیا ۔ عدالت نے ریمارکس دیے کہ اسسٹنٹ کمشنرز کی بھرتی میرٹ پر بذریعہ کمیشن کی جائے کیونکہ وزرائے اعلیٰ سول سروس ایگزیکٹیو برانچ رولز 1964 کا اختیار نہیں رکھتے اور 1964 کے اختیارات کے رولز پر الگ سے سماعت ہو گی ۔

پشاور دھماکے سے گونج اٹھا ،متعدد افراد زخمی 

یاد رہے وزرائے اعلیٰ کو ویسٹ پاکستان رولز 1964کے تحت 12فیصد کوٹے پر بھرتی کرنے کا اختیار حاصل تھا تاہم سپریم کورٹ ویسٹ پاکستان رولز 1964کو کالعدم قرار دے چکی ہے ۔

مزید : قومی


loading...