ڈی ایچ اے سکینڈل،بریگیڈیئر(ر)جاویداقبال کا اعتراف جرم،وعدہ معاف گواہ بن گئے

ڈی ایچ اے سکینڈل،بریگیڈیئر(ر)جاویداقبال کا اعتراف جرم،وعدہ معاف گواہ بن گئے
ڈی ایچ اے سکینڈل،بریگیڈیئر(ر)جاویداقبال کا اعتراف جرم،وعدہ معاف گواہ بن گئے

  


کراچی(صباح نیوز)سابق ایڈمنسٹریٹر ڈی ایچ اے بریگیڈیئر ریٹائرڈ جاوید اقبال نے ڈیفنس ہاوسنگ سوسائٹی میں مبینہ کرپشن کا اعتراف کرلیا، وعدہ معاف گواہ بن گئے۔ڈیفنس ہاوسنگ اتھارٹی میں ہونے والی مبینہ کرپشن کے کیس میں گرفتارجاوید اقبال نے اعتراف جرم کرتے ہوئے مجسٹریٹ کو اپنا اقبالی بیان ریکارڈ کرادیا۔ اپنے بیان میں انہوں نے کہاکامران کیانی کی ایلیزیم کمپنی نے تحریری معاہدے کے باوجود ناقابل فروخت الاٹمنٹ سرٹیفکیٹس معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے مارکیٹ میں فروخت کردئیے جس سے ڈی ایچ اے آگاہ نہیں تھا۔اقبالی بیان میں ملزم نے مزید کہا کہ ایلیزیم کمپنی کے ساتھ معاہدے کی منظوری ڈی ایچ اے کے ایگزیکٹو بورڈ اور مجاز اتھارٹی نے دی،اکیلے کچھ نہیں کیا اپنے تمام اثاثوں کی انکوائری کے لیے اپنے آپ کو پیش کرتے ہوئے انہوں نے کہا اس کیس میں مجھے وعدہ معاف گواہ بنایا جائے اس سے قبل چیئرمین نیب بھی ملزم جاوید اقبال کی مشروط معافی کی منظوری دے چکے ہیں۔

مزید : کراچی


loading...