سانحہ بابو سر ٹاپ، پاک فوج کے جرنیل نے انسانی ہمدردی کی نئی مثال قائم کردی

سانحہ بابو سر ٹاپ، پاک فوج کے جرنیل نے انسانی ہمدردی کی نئی مثال قائم کردی
سانحہ بابو سر ٹاپ، پاک فوج کے جرنیل نے انسانی ہمدردی کی نئی مثال قائم کردی

  


سکردو (ڈیلی پاکستان آن لائن) سکردو سے راولپنڈی جانے والی بس کو حادثہ پیش آیا تو 2 درجن سے زائد قیمتی جانیں ضائع ہوگئیں، پاک فوج کی جانب سے ریسکیو آپریشن کیا گیا اور زخمیوں کو طبی امداد فراہم کی گئی۔ ریسکیو آپریشن کے دوران لی گئی ایف سی این اے کے کمانڈر کی تصاویر سامنے آئی ہیں جن میں وہ زخمیوں کو طبی امداد کی فراہمی میں پیش پیش ہیں۔

ٹوئٹر پر انضمام ناصر کی جانب سے میجر جنرل ڈاکٹر احسان محمود خان کی چند تصاویر شیئر کی گئی ہیں جن میں وہ سانحہ بابو سر ٹاپ کے ریسکیو مشن میں پیش پیش نظر آرہے ہیں۔ ’ زندگی اور موت سے لڑتے ایک مسافر کا سر جنرل احسان محمود نے اپنی گود میں رکھا ہوا ہے جس کو جائے حادثہ سے ہسپتال منتقل کیا جارہا ہے۔‘

میجر جنرل ڈاکٹر احسان محمود خان فورس کمانڈ ناردرن ایریاز گلگت کے کمانڈر ہیں ۔ وہ پاک فوج کے 108 ویں سینئر جنرل ہیں ۔

واضح رہے کہ اتوار کے روز سکردو سے راولپنڈی جانے والی مسافر بس بابو سر ٹاپ کے مقام پر گہری کھائی میں جاگری تھی جس کے نتیجے میں 26 افراد جاں بحق ہوگئے تھے، جاں بحق افراد میں پاک فوج کے 10 جوان بھی شامل ہیں۔ پاک فوج نے ریسکیو آپریشن کرتے ہوئے زخمیوں کو ہیلی کاپٹرز کی مدد سے سی ایم ایچ گلگت منتقل کردیا ہے۔

مزید : دفاع وطن /علاقائی /گلگت بلتستان /سکردو


loading...