نیب کا زیرالتوا  مقدمات کی جلد سماعت کے لیے درخواستیں دائر کرنے کا فیصلہ

نیب کا زیرالتوا  مقدمات کی جلد سماعت کے لیے درخواستیں دائر کرنے کا فیصلہ
نیب کا زیرالتوا  مقدمات کی جلد سماعت کے لیے درخواستیں دائر کرنے کا فیصلہ

  


اسلام آباد(ڈیلی پاکستان   آن لائن ) قومی احتساب بیورو(نیب) کے 1210 ریفرنس احتساب عدالتوں میں زیرالتوا ہیں جن کی جلد سماعت کے لیے درخواستیں دائر کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

نیب کی جانب سے جاری ایک بیان میں بتایا گیا ہے کہ ادارے نے 22ماہ میں 600 ریفرنسزعدالتوں میں دائرکیے اور 71 ارب روپے قومی خزانے میں جمع کرائے ہیں۔مضاربہ اورمشارکہ اسکینڈل میں ملوث 43 ملزمان کو پکڑا گیا اور غیرقانونی ہاؤسنگ سوسائٹیز کے متاثرین کو اربوں روپے واپس دلوائے گئے۔نیب کے مطابق عدالتوں سے بدعنوان عناصر کو سزا دلوانے کی شرح 70فیصد ہے جو کسی بھی انسداد بدعنوانی کے ادارے کی نہیں۔چیئرمین نیب جسٹس (ر)جاوید اقبال کا کہنا ہے کہ بد عنوانی کے بڑے مقدمات کو منطقی انجام تک پہنچانا ان کے ادارے کی اولین ترجیح ہے، مفرور اور اشتہاری ملزمان کی گرفتاری کے لیے تمام ڈائریکٹر جنرلز نیب کو ہدایات جاری کردی گئی ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ گیلپ اورگیلانی سروے کے مطابق 59 فیصد افراد نے نیب کی کارکردگی پر اطمنان کا اظہار کیا جو عوام کے اعتماد کا ثبوت ہیں۔

مزید : قومی


loading...