پروفیسر عطا الرحمن کے لیے ایک اور بین الاقوامی اعزاز 

  پروفیسر عطا الرحمن کے لیے ایک اور بین الاقوامی اعزاز 

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)پاکستان کے معروف سائنسدان اور تعلیم دان پروفیسرڈاکٹر عطا الرحمن کی دنیاکے مختلف ممالک میں سائینس اور ٹیکنالوجی کو فروغ دینے کی گراں قدر خدمات کو بین الاقوامی سطح پر سراہنے کے لیے ایک اہم بین الاقوامی جرنل ”مالیکیولز“ نے خصوصی شمارہ نکالنے کا فیصلہ کیا ہے۔بین الاقوامی مرکز برائے کیمیائی و حیاتیاتی علوم (آئی سی سی بی ایس) جامعہ کراچی کے ترجمان کے مطابق اس جرنل کی اشاعت معروف بین الاقوامی پبلشر ایم ڈی پی آئی(MDPI)کے تحت ہوتی ہے، ترجمان نے کہا ہے کہ اس جرنل سے دنیا کے اہم ممالک کی سائینس سوسائٹیاں منسلک ہیں جن میں اینٹر نیشنل سوسائٹی آف نیکلیوسائیڈز، نیکلیوٹائیڈز اینڈنیوکلیک ایسڈ، اسپینش سوسائٹی آف میڈیسنل کیمسٹری، اور اینٹر نیشنل سوسائٹی آف ہیٹروسائکلک کیمسٹری شامل ہیں۔ ترجمان کے مطابق اس شمارے میں پروفیسر عطاالرحمن کی گراں قدر خدمات کو اُجاگر کیا جائے گا۔واضح رہے کہ پروفیسر عطاالرحمن نے کامسٹیک کے کوارڈینیٹر جنرل کی حیثیت اسلامی دنیا کے چالیس ممالک میں ہزاروں نوجوان سائینسدانوں کی معاونت کی، پاکستان میں وفاقی وزیر برائے سائینس اور ٹیکنالوجی کی حیثیت سے ملک میں انفارمیشن ٹیکنالوجی کی بنیادڈالی اور اس طرح شہروں، قصبوں اور دیہاتوں میں انٹرنیٹ کی سہولت عام کی، انہوں نے پاکستان کا پہلا سیٹلائیٹ پاک سیٹ ون خلا میں چھوڑا۔ اس کے ساتھ موبائل فون انڈسٹری میں بھی اہم تبدیلیاں ان ہی کی نگرانی میں آئی اور سن2000ء میں جن موبائل فون کی تعداد صرف تین لاکھ تھے ان کی تعداد اب160 ملین سے زیادہ ہے۔ بحیثیت بانی سربراہ اعلیٰ تعلیمی کمیشن پاکستان انھوں نے2002ء سے 2008ء کے درمیان ملکی کی اعلیٰ تعلیم کے سیکٹر میں نمایاں تبدیلیاں رونما کی اور انڈیا کو بھی ریسرچ پبلیکیشن میں پیچھے چھوڑ دیا۔

مزید :

صفحہ آخر -