مجھ کو نواز اپنے اَناجوں کے ڈھیر سے | تنویر سپرا |

مجھ کو نواز اپنے اَناجوں کے ڈھیر سے | تنویر سپرا |
مجھ کو نواز اپنے اَناجوں کے ڈھیر سے | تنویر سپرا |

  

مجھ کو نواز اپنے اَناجوں کے ڈھیر سے

لوں گا ںنہ رزق میں کسی شہ کی چنگیر سے

دیوار و در سے کچھ تو ہٹیں گی سیاہیاں

کوے اُڑا رہا ہوںمیں گھر کی منڈیر سے

اُتری رِدائے شب توبھرم ٹوٹ جائے گا

کچھ لوگ اس لیے بھی خائف ہیں سویر سے

کل گفتنی تھا جو وہی ناگفتنی ہوا

قدریں بدل گئیں زمانے کے پھیر سے

گہری نظر سے کیجیے اس کا مطالعہ

گرگٹ صفت ہے فہم میں آئے گا دیر سے

تنویر سچ تویہ ہے کہ جب جان پر بنے

بھر پور جنگ لڑتی ہے شیر سے

شاعر: تنویر سپرا

(شعری مجموعہ:لفظ کھردرے سالِ اشاعت،1980)

Mujh   Ko    Nawzaaz   Apnay   Anaajon   K   Dhair   Say

Lun   Ga   Na   Rizq   Main   Kisi   Shah   Ki   Changair   Say

Dewaar-o- Dar   Say   Kuchh   To   Haten   Gi   Siyahiyaan

Kawway   Urra   Rah   Hun   Main   Gahr   Ki   Mundair   Say

Utri   Tidaa-e- Shab   To   Bharam   Toot   Jaaey   Ga

Kuch   Log   Iss   Liay   Bhi   Hen    Khaaif    Sawair   Say

Kall   Guftani   Tha    Jo   Wahi   Na   Guftani   Hua

Qadren   Badal   Gai   Hen   Zamaanay   K   Pahir   say

Gehri   Naazar   Say   Kijiay   Iss   Ka   Mutaaiya

Girgitt   Sifat   Hay   Fehim   Men   Aaey   Ga   Dair   Say

TANVEER   Sach   To   Yeh   Hay   Keh   Jab   Jaan   Par   Banay

Bharpoor   Jang   Larrti   Hay   Billi   Bhi   Shair   Say

Poet: Tanveer   Sipra

مزید :

شاعری -رومانوی شاعری -سنجیدہ شاعری -